Hazrat Naiman RA Kay Oont Zibah Karnay Par

حضرت نعیمان رضی اللہ عنہ کے اونٹ ذبح کرنے پر

حضرت ربیعہ بن عثمان رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں کہ ایک دیہاتی اپنے اونٹ پر سوار ہو کرمدینے پہنچا اور نبیﷺ کی خدمت میں حاضر ہوا۔اس نے اپنے اونٹ کو مسجد نبوی کے باہر بٹھادیا۔ بعض صحابہ کرام نے حضرت نعیمان رضی اللہ عنہ سے کہا کہ

Hazrat Naiman RA Kay Oont Zibah Karnay Par
حضرت ربیعہ بن عثمان رضی اللہ عنہ روایت کرتے ہیں کہ ایک دیہاتی اپنے اونٹ پر سوار ہو کرمدینے پہنچا اور نبیﷺ کی خدمت میں حاضر ہوا۔اس نے اپنے اونٹ کو مسجد نبوی کے باہر بٹھادیا۔ بعض صحابہ کرام نے حضرت نعیمان رضی اللہ عنہ سے کہا کہ اگر تم اس اونٹ کو ذبح کردو تاکہ ہم سب اس کا گوشت کھائیں۔رہی اس اونٹ کی قیمت تو نبیﷺ اس کی قیمت ادا فرما دیں گے۔
چنانچہ حضرت نعیمان رضی اللہ عنہ نے وہ اونٹ ذبح کر دیا۔جب دو دیہاتی واپس جانے لگاتو اس نے اپنے اونٹ کو ذبح شدہ پایا۔اس نے شور مچا کر نبیﷺ کو پکارا۔آپﷺ باہر تشریف لائے اور فرمانے لگے کہ یہ کس نے کیا کیاہے؟ صحابہ کرام نے عرض کیا:نعیمان رضی اللہ عنہ نے!
آپﷺ اس کی تلاش میں ضباعہ بنت زبیربن عبدالمطلب کے گھر پہنچے۔

نعیمان رضی اللہ عنہ وہاں چھپے ہوئے تھے۔

کسی نے ان کی طرف اشارہ کر کے نبیﷺسے کہاکہ میں نے نعیمان رضی اللہ عنہ کو یہیں دیکھا ہے۔نبی ﷺنے انہیں وہاں سے نکالا اور پوچھاکہ تم نے ایسا کیوں کیا ہے۔ نعیمان رضی اللہ عنہ بولے:یارسول اللہ!لوگوں نے مجھے کہاتھا کہ تم اس اونٹ کو ذبح کردو تو ہم سب گوشت کھائیں گے اور اس کی قیمت نبیﷺ ادا کردیں گے۔یہ سن کر نبیﷺ نے اُن کے چہرے سے مٹی جھاڑی اور مسکرائے۔ اس کے بعد آپﷺ نے اس دیہاتی کو اونٹ کی قیمت ادا فرمادی۔

Your Thoughts and Comments