Do Bache - Joke No. 1620

دو بچے - لطیفہ نمبر 1620

ایک کنوراہ نوجوان ایک ریسٹوران میں بیٹھا ناشتہ کر رہا تھا۔ کہ یکایک اس کی نظر اپنے سامنے رکھے ہوئے ابلے ہوئے انڈے پر گئی اور وہ یہ دیکھ کر حیران رہ گیا۔۔۔کہ اس پر کچھ لکھا ہوا تھا۔ اس نے غور سے تحریر کو دیکھا اور پڑھا ۔ لکھا تھا اگر اس تحریر پر کسی ایسے آسودا حال، کنوارے نوجوان کی نظر پڑے جو ایک زمیندار کی خوبصورت 18سالہ بیٹی سے شادی کرنا چاہتا ہو۔ تو اس پتے پر خط لکھے نوجوان نے فوراً خط لکھ دیا۔ چند روز بعد اسے جواب ملا آپ کا خط بہت دیر بعد ملا ہے میری شادی ہو چکی ہے۔ اب تو میرے دو بچے بھی ہو گئے ہیں۔

مزید لطیفے

جج

Judge

کاش

Kaash

نیلام گھر

Neelam Ghar

ایک جج

Aik judge

بیٹا

Beta

ایک روز

aik roz

اقبال احمد سے

Iqbal ahmad se

خاتون اور شوہر

Khatoon Aur shohar

دور اندیش لڑکی

door andesh larki

دوسری جنگ عظیم

dosri jang azeem

غلط بس

ghalat bus

شخص ملا نصیرالدین سے

Shakhs mula naseer u Din sai

Your Thoughts and Comments