Dr

ڈاکٹر

ایک ڈاکٹر پاگل خانے کا معائنہ کر رہا تھا۔ تمام پاگل منہ سے گاڑیوں کی طرح آواز نکال رہے تھے کبھی کبھی کوئی اٹھ کر کمرے کا چکر بھی لگانا اور پھر کسی سے ٹکرا کر کہتا کہ ایکسیڈنٹ ہوا ہے لیکن ایک پاگل خاموش بیٹھا تھا۔ ڈاکٹر اس کے پاس پہنچا اور کہا کہ تم کیوں گاڑی نہیں چلاتے؟ اس پاگل نے کہا۔ میں کوئی پاگل ہوں؟ ڈاکٹر نے کہا ”اچھا تو تم سیانے ہو ٹھیک ہے میں تمہیں پاگل خانے سے آزاد کرتا ہوں جاوٴ گھر چلے جاوٴ۔ یہ سن کر وہ پاگل اٹھا اور ”بوم‘ بوم“ کی آواز نکال کر بولا۔”ڈاکٹر صاحب! اگر آپ کا گھر راستے میں ہے تو آپ کو ڈراپ کرتا چلوں؟“

Your Thoughts and Comments