Dr

ڈاکٹر

آدھی رات کے وقت ڈاکٹر اپنے کمرے میں آرام کر رہا تھا کہ اس کی بیوی نے اسے سوتے سے اٹھا کر کہا۔ ”ٹوائلٹ بلاک ہو گیا ہے پلمبر کو فون کر کے بلا لو… “”ادھی رات کو اسے فون کرنا نا مناسب نہیں ہے۔“ ڈاکٹر نے کہا۔ بیوی نے سمجھایا ”اگر پلمبر کو اسوقت تمہاری ضرورت پڑتی تو وہ مناسب اور نا مناسب وقت کا بالکل خیال نہ کرتا“ ڈاکٹر بیوی کی بات سے متاثر ہو گیا۔ اس نے پلمبر کو بلانے کے لئے فوراً فون کیا تو پلمبر نے کہا کہ میں اس وقت نہیں آ سکتا صبح کو حاضر ہو جاوٴں گا۔ ڈاکٹر نے بیوی والی بات دہرائی اور کہا۔”اگر تم چاہتے ہو کہ میں رات کے وقت تمہارے بلانے پر تمہاری ہاں آتا رہوں تمہیں بھی ابھی اور اسی وقت میرے پاس آنا پڑے گا۔“ پلمبر نے شکست تسلیم کر لی اور تھوڑی ہی دیر میں وہ اپنے اوزاروں کا تھیلا لے کے آموجودہ وا۔ ”کیا پریشانی ہے؟“ پلمبر نے پوچھا۔ ”ٹوائلٹ بلاک ہو گیا ہے۔“ ڈاکٹر نے بتایا۔ پلمبر نے ٹوائلٹ کو چاروں طرف سے گھوم کر دیکھا۔ ادھر ادھر تھپتھپایا دو ایک گھونسے مارے۔ پھر تھیلے سے دو کیلیں نکال کر اس میں ڈال دیں۔ ”اگر صبح تک ٹوائلٹ کام نہ کرے۔“ اس نے ڈاکٹر جیسے انداز میں کہا۔ ”مجھے فون کر دیں۔“ اور اپنا تھیلا اٹھا کر وہاں سے چل دیا۔

Your Thoughts and Comments