Italy Ke Aik Qasbay Ka Hajjam - Joke No. 1131

اٹلی کے ایک قصبے کا حجام - لطیفہ نمبر 1131

اٹلی کے ایک قصبے کا حجام نہایت مغرور اور ضدی طبعیت کا مالک تھا۔ ایک دن ایک گاہک نے بتایا کہ وہ چھٹیوں میں روم جا رہا ہے اور وہ پوپ سے بھی ملنے کی کوشش کرے گا۔ حجام نے اس کا مذاق اڑاتے ہوئے کہا۔ ”تم اور پوپ سے ملو گے؟ مجھے تو یہ سوچ کر ہنسی آ رہی ہے‘ پوپ تو بادشاہوں سے ملتا ہے‘ وہ تم سے کیوں کر ملے گا؟“ گاہک نے یہ سن کر خاموش رہا۔ ایک ماہ بعد وہی گاہک دوبارہ بال بنوانے حجام کے پاس پہنچا۔ حجام نے اس سے پوچھا کہ تمہیں روم کیسا لگا؟ ”بہت مزہ آیا اور میں پوپ سے بھی ملا۔“ جواب ملا حجام نے حجت کرتے ہوئے کہا۔ ”اچھا تو تم نے مرکزی چوک پر کھڑے ہو کر دوسرے لوگوں کے ساتھ اسے دیکھا ہو گا۔“ ہاں! لیکن دو گارڈ میرے پاس آئے اور کہنے لگے کہ پوپ تم سے تنہائی میں ملنا چاہتا ہے۔ وہ مجھے اپنے ساتھ پوپ کے نجی کمرے میں لے گئے۔“ ”واقعی! پوپ نے تم سے کیا کہا؟“ حجام نے حیرانگی کے عالم میں دریافت کیا۔ گاہک اطمینان سے جواباً بولا۔ ”پوپ نے مجھ سے سوال کیا کہ تمہارے بالوں کی اتنی گھٹیا کٹائی کس احمق نے کی ہے؟“

مزید لطیفے

ہمیشہ یاد

Hamesha Yaad

میں خوبصورت ہوں

mein khoobsurat hon

اندھیر

andher

لطیفے باپ بیٹے سے

latifay baap beti se

کسی فقیر نے

Kisi faqeer nay

دعوت

dawat

علی گڑھ

ali garh

سینٹرل جیل

Central Jail

نرس

nurse

ایک پاگل

aik pagal

کمینہ

kamena

فٹ بال آئندہ چاند پر نہ آئے

Football ainda chand par na aaye

Your Thoughts and Comments