Manager Sahib - Joke No. 1008

منیجر صاحب - لطیفہ نمبر 1008

ایک کمپنی کے منیجر صاحب دوپہر کا کھانا کھا کر لوٹے تو بڑے اچھے موڈ میں تھے۔ انہوں نے پورے اسٹاف کو بلا کر چار لطیفے سنائے۔ ایک لڑکی کے سوا سب لوگ قہقہے لگانے لگے۔ منیجر نے چونک کر لڑکی سے پوچھا۔ ”نازش! تم میں شاید جس مزاح نہیں یا لطیفے تمہاری سمجھ میں نہیں آئے؟“ لڑکی بولی ”منیجر صاحب! مجھے ہنسنے کی ضرورت ہیں ہے کیونکہ کل میں یہ نوکری چھوڑ کر جا رہی ہوں۔“

مزید لطیفے

استاد شاگرد سے

Ustad Shagird se

ایک قیدی بیمار پڑا

aik qaidi bemaar para

شور

Shor

منور ظریف

munawar zarif

مشہور وکیل

mashhoor wakeel

ایک دیہاتی

aik dehati

نوکرانی

naukri

کھٹ پٹ

khat patt

بیمار

bemaar

عصمت چغتائی

ismat chughtai

صحت مند مرد کی تلاش

sehat mand mard ki talaash

اورنگزیب کی وفات

aurangzeb ki wafat

Your Thoughts and Comments