Mehman

مہمان

ایک گھر میں مہمان آنے والے تھے۔ میاں بیوی پریشان تھے کیونکہ مہینے کی آخری تاریخیں تھیں۔ اورتنگ دست تھے۔ آخر طے ہوا کہ جب مہمان آئیں تو خاوند باورچی خانہ میں چلا جائے اور ایک دیگچی گرادے۔ بیوی پوچھے تو بتائے کہ پلاوٴ گر گیا۔ دوسری مرتبہ پھر برتن گرا دے اور کہے کہ زردہ کا برتن گر گیا ہے۔ تیسری مرتبہ برتن گرے تو کہے کہ سالن گر گیا ہے۔ پھر بیوی کہے کہ چلو رات کا سالن ہی یعنی دال لے آوٴ… مہمان آئے تو پروگرام کے مطابق خاوند باروچی خانے میں چلا گیا اور اس کے ہاتھ سے دیگچہ گرا۔ بیوی نے پوچھا کہ کیا گرایا؟ خاوند نے کہا۔ رات کی دال ہی سب سے پہلے گر گئی ہے۔

Your Thoughts and Comments