Murghiyan Paalne - Joke No. 875

مرغیاں پالنے - لطیفہ نمبر 875

مرغیاں پالنے کا ایک شتہار دیکھ کر ایک صاحب کو مرغیاں پالنے کا شوق ہوا۔ بہت سوچ بچار کے بعد انہوں نے منصوبہ بنایا۔ اس منصوبہ کے تحت ان کو ملازم رکھنا تھا۔ اخبار میں اشتہار دیا گیا۔ ایک صاحب پہنچے انٹرویو میں ان سے پوچھا گیا۔ ”کیوں میاں! مرغیوں سے کچھ دلچسپی ہے؟“ امیدوار نے جواب دیا۔ ”صاحب! میں تو غریب آدمی ہوں۔ جو دیں گے کھا لوں گا۔“

مزید لطیفے

ایک دوست دوسرے سے

aik dost dosray se

مزدور

Mazdoor

اسمبلی

assembly

میزبان

Maizban

استاد شاگرد سے

Ustaad shagird se

ملا نصیرالدین

mula naseer ud din

باپ بیٹے سے

Baap Bete se

نوکری

Naukri

ایک مینڈک

aik mandak

بچہ دکاندار سے

bacha dukandar se

نوکرانی

naukri

ایک بچہ گھبرایا ہوا

aik bacha ghabraya hua

Your Thoughts and Comments