Party - Joke No. 792

پارٹی - لطیفہ نمبر 792

پارٹی میں اس حسین لڑکی کی قمیض کہنیوں تک تھی اس کے باوجود ایک نوجوان اس کی سڈول کلائیوں کو للچائی ہوئی نظروں سے دیکھے جا رہا تھا۔ لڑکی گفتگو کے دوران اس کے ندیدے پن کو محسوس کرتے ہوئے بولی۔ ”حالانکہ مجھے بچپن میں حفاظتی ٹیکے لگ چکے ہیں لیکن پچھلے دنوں میرا بلڈٹسٹ کرنے کے بعد ڈاکٹر نے چند بیماریوں کے ٹیکے دوبارہ لگائے وہ جگہ ابھی تک بری طرح دکھ رہی ہے جہاں ٹیکے لگے ہیں۔“ کہاں لگے تھے آپ کو ٹیکے ؟ نوجوان نے اشتیاق سے پوچھا۔ ”لاہور میں“ لڑکی نے بڑی معصومیت سے جواب دیا اور آگے بڑھ گئی۔

مزید لطیفے

لکھا ہوا کھیل

Likha Huwa khail

مالک مکان

maalik makaan

ایک خاتون

Aik Khatoon

نئی پرانی نسل

nai purani nasal

ایک بچہ گھبرایا ہوا

aik bacha ghabraya hua

حفیظ جالندھر

Hafeez jalindher

ایک دیہاتی

aik dehati

بھکاری بس سٹاپ پر

Bhikaar bus stop per

کوٹ

coat

تحریر درج

tehreer darj

میں بھی آرام سے ہوں

mein bhi Aram se hon

بھکاری

bhikari

Your Thoughts and Comments