Ek Shay Jab Bhi Hath Me Aye - Puzzle No. 679

اک شے جب بھی ہاتھ میں آئے

ek shay jab bhi hath me aye

مزید پہیلیاں

اپنے منہ کو جب وہ کھولے

Apne Munh Ko Jab Wo Khole

یا وہ آتا ہے یا وہ جاتا ہے

Ya Wo Aata Hai Ya Wo Jata Hai

دیکھے ہیں‌ ایسے بھی سمندر

Dekhe Hain Aise Bhi Samandar

شب بھر وہ پانی میں نہائے

Shab Bhar Woh Pani Me Nahaye

گن کر دیکھا تو وہ ایک

Gin Kar Dekha Tu Wo Aik

جال کے اوپر چڑیا آئے

Jaal Ke Opar Chirya Aye

پہلے شوق سے کھائیے

Pehle Shok Sy Khaiye

گوڑا چٹا چاندی جیسا

Gora Chitta Chandi Jaisa

سونے کا بن کر آتا ہے

Sony Ka Ban Kar Ata Hai

سب نے مل کر حلقہ باندھا

Sab Ne Mil Kar Halqa Bandha

اک ڈبے میں‌ میٹھے دانے

Ek Dabby Me Meethe Danny

موری سے نکلا اک سانپ

Mori Se Nikla Ek Saanp

Your Thoughts and Comments