Mazah 1052476072

فیصل کاشف سے

فہد شبیر جمعرات جنوری

فیصل (کاشف سے) :”تم مرغی کیوں ابال رہے ہو؟“۔ کاشف: ”اس لیے تا کہ یہ ابلے ہوئے انڈے دے“۔

Your Thoughts and Comments