چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ نے نتھیاگلی میں جوڈیشل لاجز کے توسیعی منصوبہ کا سنگ بنیاد رکھ دیا

ہفتہ اپریل 21:15

ایبٹ آباد۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 20 اپریل2019ء) چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس وقار حسین سیٹھ نے نتھیاگلی میں جوڈیشل لاجز کے توسیعی منصوبہ کا سنگ بنیاد رکھ دیا۔ منصوبہ 6 کروڑ 20 لاکھ کی لاگت سے دو سال کی مدت میں مکمل ہو گا، منصوبہ کی تکمیل سے سیاحتی مقام پر سپریم کورٹ اور ہائی کورٹس کے ججز کیلئے رہائش کی سہولت میسر ہو گی۔

(جاری ہے)

تقریب میں کمشنر ہزارہ ظہیر الاسلام، ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج صوفیہ وقار، ڈپٹی کمشنر عامر آفاق، ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر ارشد اعوان، ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر اسد خان جدون اور سول ججز بھی موجود تھے۔

اس موقع پر رجسٹرار پشاور ہائی کورٹ نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ 1983ء میں جوڈیشری کیلئے جگہ فراہم کی گئی تھی جو موجودہ ضروریات کے مطابق نہیں تھی، دو سال کی محنت کے بعد منصوبہ کو حتمی شکل دی گئی۔ اس حوالہ سے انتظامی افسران سمیت دیگر نے متعدد اجلاسوں کے بعد اس منصوبہ کو حتمی شکل دی۔ اس کو باقاعدہ عملی جامہ پہنانے کیلئے چیف جسٹس وقار حسین نے اس کا سنگ بنیاد رکھا ہے، برفانی علاقہ ہونے کی وجہ سے سال میں کام کیلئے پانچ ماہ ہی ملتے ہیں، منصوبہ کی تکمیل سے ججز کی تمام ضروریات یہاں پوری ہوں گی۔

ایبٹ آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments