میری جنگ ایک طاقتور مافیا کے ساتھ ہے جو میرے خلاف ہر محاذ پر سرگرم ہے، میں نے نہ کوئی قرض معاف کرایا نہ ہی میں ڈیفالٹر ہوں، سابق اسپیکر قومی اسمبلی ڈاکٹر فہمیدا مرزا کا پریس کانفرنس سے خطاب

جمعرات جون 22:10

بدین (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 جون2018ء) سابق اسپیکر قومی اسمبلی ڈاکٹر فہمیدا مرزا نے کہا ہے کہ میری جنگ ایک طاقتور مافیا کے ساتھ ہے جو میرے خلاف ہر محاذ پر سرگرم ہے میں نے نہ کوئی قرض معاف کرایا نہ ہی میں ڈیفالٹر ہوں ۔جمعرات کو بدین میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے سابقہ اسپیکر قومی اسمبلی ڈاکٹر فہمیدا مرزا نے کہا کہ جمہوری طاقتوں کو ایک ہی کوشش کرنی چائیے کہ الیکشن صاف اور شفاف ہوں۔

انہوں نے کہا ایک سازش کے تحت مجھ پر قرض معاف کرانے اور ڈیفالٹر ہونے ہونے کا بے بنیاد پروپیگنڈا کیا جارجا ہے ۔

(جاری ہے)

ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے کہا قرض معاف کرانے اور ڈیفالٹر ہونے کا جو الزام مجھ لگایا جا رہا تین بار ہائی کورٹ اور ایک بار الیکشن ٹربینل ان الزام اور اعتراض کو رد کرکیالیکشن لڑنے کی اجازت دے چکے ہیں ،بار بار مجھ پر یہ الزام توہین عدالت ہیں میری مخالف طاقتوں کو میرے خلاف کچھ نہیں ملتا تو پرانے مسترد الزام پھر سامنے لے آتے ہیں اعلی عدالتوں کے باربار فیصلوں کو مذاق بنایا جارہا ہے اور عدالتی فیصلوں کے مطابق مجھ پر قرضوں اور ڈیفالٹر کے الزامات غلط ہیں میں نے کھبی قرض معاف نہیں کروایا یہ عدالتوں میں ثابت کر چکی ہوں اور جن نے قرض معاف کرائے ملک کو لوٹا سندھ کو تباہ کیا ان کے خلاف کاروائی کیوں نہیں ہوتی جن الزامات کو عدالتں بار بار مسترد کر چکی ہیں ان پر مخالفین کے الزام توئین عدالت ہی. اس موقع پر ڈاکٹر فہمیدا مرزا کے بیٹے اور الیکشن امیدوارں حسنین مرزا نے کہا میرے کاغذات نامزدگی مسترد نہیں کئے گئیے خبر غلط اور بے بنیاد ہے انہوں نے کہا عوام نے ہمیشہ ہم پر اعتماد کیا اور ہم نے اس اعتماد پر ہر صورات اور ہر حالات میں پورا اترنے کی کوشش کی عوام سے ہمارا رشتہ جینے مرنے اور خوشی غمی کا ہے جو کوء طاقت نہیں ٹوڑ سکتی انہوں نے کہا جس مافیا کے خلاف ہم نے جنگ کا اغاز کیا ہے وہ الیکشن میں ہمارا مقابلہ تو نہیں کر سکتے اس لئے پروپیگنڈا اور سازشیں کر رہے ییں

بدین شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments