پرویز خٹک نے بلدیاتی الیکشن میں کامیابی وزیراعظم کے مستقبل کیلئے لازمی قرار دے دی

بلدیاتی انتخابات جیتنا پاکستان تحریک انصاف اور عمران خان کے مستقبل کا سوال ہے۔ وزیر دفاع کا بنوں میں خطاب

Sajid Ali ساجد علی جمعرات 27 جنوری 2022 16:52

پرویز خٹک نے بلدیاتی الیکشن میں کامیابی وزیراعظم کے مستقبل کیلئے لازمی قرار دے دی
بنوں ( اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین ۔ 27 جنوری 2022ء ) پاکستان تحریک انصاف کے رہنماء اور وزیر دفاع پرویز خٹک نے بلدیاتی الیکشن میں کامیابی وزیراعظم کے مستقبل لازمی قرار دے دی ۔ تفصیلات کے مطابق بنوں میں ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات جیتنا پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) اور عمران خان کے مستقبل کا سوال ہے ، پی ٹی آئی میں گروپنگ کو نہیں مانتا ، اختلاف پیدا کرنے والے دوسری پارٹیوں میں جائیں ، مہنگائی سے متعلق ہمارے پیچھے پروپیگنڈ ا کیا جارہا ہے ، ورکر عوام کے ساتھ مہنگائی پر بحث کرے میدان خالی نہ چھوڑیں ، پارٹی میں ورکر کو نظر انداز کیا گیا اب ان کو آگے لانے کا وقت ہے ، پی ٹی آئی کی تنظیم سازی ورکر کی مشاورت سے مکمل کریں گے ۔

پرویز خٹک نے کہا کہ ماضی کے حکمرانوں نے ملک کو تباہ و برباد کیا ، جس کی وجہ سے ملک قرضوں میں ڈوبا ہوا ہے ، پہلے ملکی ذخائر میں 15 ارب ڈالر تھے آج 30 ارب ڈالر ہے ، این ایف سی ایوارڈ میں خیبر پختونخوا کو حق نہیں دیا جارہا ، مرکز اور دیگر صوبے سے اپنے حقوق لے کر رہیں گے ۔

(جاری ہے)

گزشتہ روز اورکزئی میں گفتگو کرتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی رہنماء اور وزیردفاع پرویز خٹک نے کہا کہ اب اگربلدیاتی انتخابات میں ہارگئے تو تحریک انصاف ہار گئی، ہارنے اور جیتنے کے ذمہ دار متعلقہ اضلاع کے ایم پی ایزاور ایم این ایز ہوں گے،چور پیسے کے ذریعے پی ٹی آئی کے خلاف پروپیگنڈا کر رہے ہیں ، ملک میں کورونا کی وجہ سے مہنگائی آئی، امریکہ، یورپ و دیگر ممالک میں پاکستان سے زیادہ مہنگائی ہے، 80 فیصد تیل، گیس، گھی اور دال باہر سے برآمد کی جاتی ہیں۔

پرویز خٹک نے کہا کہ پی ٹی آئی کے علاوہ باقی تمام پارٹیاں ختم ہوچکی ہیں، چوروں نے پیسوں کے ذریعے پی ٹی آئی کے خلاف پروپیگنڈے کیلئے ہر چیز کو خریدا ہوا ہے، اب اگربلدیاتی انتخابات میں ہارگئے تو تحریک انصاف ہار گئی ، ہارنے اور جیتنے کے ذمہ دار متعلقہ اضلاع کے ایم پی ایزاور ایم این ایز ہوں گے ۔ اس سے پہلے وزیر دفاع اور تحریک انصاف کے صوبائی صدر پرویز خٹک نے ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی میں دھڑے بندی پارٹی کو تباہ کرسکتی ہے، جس کسی نے ٹکٹوں کی تقسیم میں پارٹی کا فیصلہ نہ مانا تو ان کو سبق سکھائیں گے،اگر آئندہ یہ نظام رہا تو کبھی بھی الیکشن میں حصہ نہیں لیں گے، آئندہ انتخابات میں رشتہ داروں کو پارٹی ٹکٹ نہیں دیا جائے گا ۔

انہوں نے کہا کہ مارچ میں ہونے ہوالے بلدیاتی انتخابات ہر صورت جیتنا ہے۔پرویز خٹک نے کہا کہ نوشہرہ میں ان کا مقابلہ اپنے بھتیجے سے تھا، درمیان میں جمعیت علماء اسلام کا مولوی نکل آیا ، اگر آئندہ یہ نظام رہا تو کبھی بھی الیکشن میں حصہ نہیں لیں گے، آئندہ انتخابات میں رشتہ داروں کو پارٹی ٹکٹ نہیں دیا جائے گا ، جو امیدوار مقابلہ کرسکتے ہوں ان کو ٹکٹ دیں گے، اس مرتبہ الیکشن ہار گئے تو پارٹی اور عمران خان کو شدید نقصان پہنچے گا۔

بنوں شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments