چکوال تعلیمی اداروں کی سکیورٹی کے حوالے سے اہم اجلاس

جمعرات اگست 19:06

چکوال ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 اگست2017ء) ڈپٹی کمشنر چکوال ڈاکٹر عمر جہانگیر اور ڈی پی او چکوال محمد ہارون جوئیہ کی زیر صدارت ڈی سی آفس میں تعلیمی اداروں کی سکیورٹی کے حوالے سے ایک اہم اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل چکوال ، چیف ایگزیکٹو آفیسر ایجوکیشن،اسسٹنٹ کمشنر، ڈپٹی ڈائریکٹر کالجز چکوال، محکمہ پولیس کے افسران، سرکاری و نجی تعلیمی اداروں کے پرنسپل اور مالکان کے علاوہ دیگر متعلقہ محکموں کے افسران بھی شریک تھے۔

اجلاس میں ڈپٹی ڈائریکٹر کالجز اور چیف ایگزیکٹو آفیسر ایجوکیشن چکوال نے چکوال کے اے پلس تعلیمی اداروں کی سکیورٹی کے حوالے سے اٹھائے گئے اقدامات سے متعلق سلائیڈ کی مدد سے بریفنگ دی گئی۔ ڈپٹی کمشنر اور ڈی پی او نے فرداً فرداً تمام تعلیمی اداروں کی سکیورٹی سے متعلق آگاہی حاصل کی۔

(جاری ہے)

اس موقع پر ڈپٹی کمشنر نے شرکاء اجلاس پر واضع کیا کہ تعلیمی اداروں کی سکیورٹی سے متعلق کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔

بالخصوص تعلیمی اداروں میں چار دیواری ،ریزرو وائر تار،واک تھرو گیٹ اور سی سی وی ٹی وی کیمروں کی تنصیب اور موجودگی لازمی قرار دی۔ انہو ں نے متعلقہ افسران کو واضع ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ جو تعلیمی ادارے حکومتی سکیورٹی کے ایس او پیز کے مطابق معیار پر پورا نہ اتریں ان تعلیمی اداروں کیخلاف قانونی نوٹسز جاری کیے جائیں اور انہیں پابند کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ تمام تعلیمی ادارے اس بات کے پابند ہیں کہ وہ چاردیواری کو آٹھ فٹ تک اونچا کیا جائے اور اس کے اوپر دو فٹ خاردار تاریں لگائی جائیں۔ تربیت یافتہ سکیورٹی گارڈز تعینات کیے جائیں۔ واک تھرو گیٹ لگائے جائیں، کنٹرول روم قائم کیے جائیں، آنے والوں کو میٹل ڈیٹیکٹر سے چیک کیا جائے، سی سی ٹی وی کیمرے لگائے جائیں اور مین گیٹ پر بیئرر لگائے جائیں۔ انہوںنے کہا کہ تعلیمی اداروں کی سکیورٹی کے حوالے سے زیرو ٹالرنس ہے۔ اس موقع ڈی پی او نے سکیورٹی کے حوالے سے شرکاء اجلاس پر واضع کیا کہ تعلیمی اداروں کی سکیورٹی اولین ترجیح ہے اور اس پر سو فیصد عمل درآمد کروایا جائے گا۔

چکوال شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments