چیف جسٹس آف بلوچستان ہائیکورٹ نے دالبندین میں واقع جوڈیشنل کمپلیکس کا افتتاح کر دیا

عوام کو بروقت انصاف کی فراہمی کیلئے عدلیہ اپنا کام کررہی ہے،، دوردراز کے علاقوں میں انصاف کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے گا ،جسٹس جمال خان مندوخیل

ہفتہ ستمبر 00:00

دالبندین(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 18 ستمبر2020ء) چیف جسٹس آف بلوچستان جسٹس جمال خان مندوخیل نے دالبندین میں واقع جوڈیشنل کمپلیکس کا افتتاح کیا۔ اس موقع پر بلوچستان ہائی کورٹ کے جسٹس صاحبان،اعلی سرکاری آفیسران،سیاسی و قبائلی معتبرین کی بڑی تعداد بھی موجود تھی۔ قبل ازیں دالبندین پہنچنے پر چیف جسٹس آف بلوچستان ہائی کورٹ کو پولیس کے چاق و چوبند دستے نے سلامی پیش کی۔

بعد ازاں چیف جسٹس آف بلوچستان ہائی کورٹ جسٹس جمال خان مندوخیل نے کہا کہ عوام کو بروقت انصاف کی فراہمی کیلئے عدلیہ اپنا کام کررہی ہے انہوں نے کہا کہ دوردراز کے علاقوں میں انصاف کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے گا انہوں نے کہا کہ عوام کا انصاف کے متعلق عدلیہ پر بہت بڑا انحصار ہے اگر عدالتیں بروقت لوگوں کو انصاف فراہم کریں گے تو امن وامان ہوگا اور ترقی و خوشحالی بھی آئے گی انہوں نے کہا کہ دوردراز کے علاقوں کا دورہ کرنے کے بعد انھیں لوگوں کے مسائل کا شدت سے احساس ہونے لگا ہے تعلیم صحت بجلی جیسی بنیادی سہولیات کی فراہمی اشد ضروری ہے امن وامان پر توجہ مرکوز رہنی چاہیے انہوں نے کہا کہ ہم عوامی ٹیکسوں کی بدولت تنخواہیں اور مراعات لیتے ہیں اس لیے اپنے اندر کے ضمیر کو زندہ رکھنے کیلئے حق اور سچ کا ساتھ دینا چائیے آخر ہمیں بھی اللہ تبارک و تعالی کی بارگاہ میں جواب دہ ہونا پڑے گا ناانصافی سے مذید مسائل جنم لیں گے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ جوڈیشنل کمپلیکس کی تعمیر کا مقصد محض ایک بلڈنگ کھڑا کرنا نہیں بلکہ یہ انصاف کی فراہمی کے لیے لوگوں کے اعتماد کا ادارہ ثابت ہوگا انہوں نے جوڈیشنل کمپلیکس کی لائبریری میں بنیادی سہولیات سمیت کمپلیکس میں بجلی،ایئرکنڈیشنڈ،پانی اور دیگر سہولیات فراہم کرنے کا اعلان کردیا افتتاحی تقریب سے بلوچستان ہائی کورٹ کے جسٹس عبدالحمید بلوچ ایڈووکیٹ،چاغی بار کے صدر میر عبدالشکور بادینی ایڈووکیٹ،عبدالباسط شاہ ایڈووکیٹ اور دیگر نے بھی خطاب کیا تقریب میں جسٹس یاشم کاکڑ،جسٹس کامران ملاخیل،جسٹس عبداللہ بلوچ،سیکرٹری صحت دوستین جمالدینی،کمشنر رخشان ڈویژن سعید احمد عمرانی،سابقہ وزیر حاجی علی محمد نوتیزئی،ڈی سی چاغی آغا شیر زمان درانی،ایس پی پولیس چاغی کیپٹن( ر) زوہیب محسن،اسسٹنٹ کمشنر جاوید ڈومکی،گورنمنٹ کنٹریکٹر حاجی عبدالروف ریکی،ایکسین بی اینڈ آر فقیر محمد کاکڑ، قبائلی رہنماء حاجی صاحب خان محمد حسنی،ملک خدابخش سیاہ پاد،میر اسفندیار خان یار محمد زئی،سردار نعیم خان سنجرانی سابق انجمن تاجران صدر و جنرل سکرٹری ٹکری نورا احمد ساسولی ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفیسر محمد ادریس نوتیزئی پیپلزپارٹی پارٹی کے صوبائی رہنما میر شاہ نواز رئیسانی اور دیگر بھی بڑی تعداد میں موجود تھے۔

دالبندین‎ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments