معاشرے میں خواتین کو مساوی حقوق دئیے بغیر ترقی کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہو سکتا ، ڈاکٹر محمد اقبال

جمعرات ستمبر 13:04

گلگت (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 19 ستمبر2019ء) وزیر تعمیرات عامہ گلگت بلتستان ڈاکٹر محمد اقبال نے کہا ہے کہ معاشرے میں خواتین کو مساوی حقوق دئیے بغیر ترقی کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہو سکتا ، کامیابی کا انحصار باہمی اعتماد اور جہد مسلسل سے مشروط ہے ، گلگت کی جن خواتین کو مواقع ملے اور حوصلہ افزائی کی گئی ا نہوں نے دنیا میں کامیابی کے جھنڈے گاڑھ دئیے ، قوم کی بیٹیوں نے نہ صرف اپنا نام بنایا بلکہ گلگت بلتستان کا سر فخر سے بلند کر دیا ، ثمینہ بیگ اور انیتا کریم جیسی خواتین ہمارا فخر ہے۔

ڈاکٹر محمد اقبال گزشتہ روز پسو گوجال میں گلگت بلتستان گرلز فٹبال لیگ کی اختتامی تقریب سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے مزید کہا کہ خواتین کو صرف علم کے حصول اور ملازمت کیلئے رسائی دینا ہی کافی نہیں بلکہ انہیں برابری حقوق دیکر معاشرے میں ان کی حیثیت کو قبول کرنے کی ضرورت ہے۔

(جاری ہے)

ا نہوں نے کہا کہ خواتین کی صحت مندانہ تربیت کیلئے کھیلوں کا انعقاد ضروری ہے ، اًپر ہنزہ کے لوگ نہایت امن پسند ہیں اور ہمسایہ ملک چین کے ساتھ پاکستان کی بہترین دوستی گوجال کے عوام کا مرکزی کردار ہے کیونکہ انہوں نے ہمسایوں کے ساتھ مثالی دوستی کو پروان چڑھایا۔

انھوں نے کہا کہ پائیدار ترقی کیلئے خواتین کر برابری کی بنیاد پر حقوق دینے ہونگے ، گوجال گرلز فٹبال لیگ سے دنیا کو ایک مثبت پیغام ملتا ہے ۔وزیر تعمیرات ڈاکٹر اقبال نے ترقیاتی تنظیم کی اپیل پر پسو میں فٹبال گرائونڈ اور قراقرم ہائی وے سے گرائونڈ تک سڑک کی تعمیر کا اعلان کیا۔ انہوں نے آئندہ سال کیلئے گلگت بلتستان گرلز فٹ بال لیگ کو سرکاری کلینڈر ایونٹس میں شامل کرنے کا بھی عندیہ دیا۔

انہوں نے ٹورنامنٹ کی فاتح چپورسن کی ٹیم کیلئے نقد 20 ہزار روپے، رنر اپ شمشال ٹیم کیلئے 15 ہزار اور بیسٹ پلیئر کیلئے 5 ہزار کے انعامات تقسیم کئے۔ مہمان خصوصی نے آخر میں کھلاڑیوں میں میڈل اور انعامات تقسیم کئے اس سے قبل معروف سماجی شخصیت علی قربان نے سپاسنامہ پیش کیا۔ تقریب کے میر محفل سیکرٹری سیاحت راجہ فضل خالق تھے۔اس سے قبل گلگت بلتستان گرلز فٹ بال لیگ کا فائنل چپورسن اور شمشال کی ٹیمون کے درمیان ہوا ، دونوں ہاف میں کھلاڑیوں نے زبردست کھیل پیش کیا اور میچ دو دو گول سے برابر رہا تاہم پینلٹی ککس کی بنیاد پر چپورسن ٹیم نے کامیابی حاصل کی او رٹرافی اپنے نام کر لی ، میچ دیکھنے کیلئے تماشائیوں کی بہت بڑی تعداد موجود تھی۔

گلگت شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments