گوجرانوالہ میں سفاک باپ نے 6 ماہ کے بیٹے کو قتل کر دیا

بچے کو گھر سے باہر لے گیا، بچے کے رونے پر غصہ آیا جس پر بچے کو نہر میں پھینک دیا۔ ملزم کا اعترافی بیان

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین بدھ 6 اکتوبر 2021 14:22

گوجرانوالہ میں سفاک باپ نے 6 ماہ کے بیٹے کو قتل کر دیا
گوجرانوالہ (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 06 اکتوبر 2021ء) : گوجرانوالہ میں ایک سفاک شخص نے اپنے چھ ماہ کے بیٹے کو قتل کر دیا۔ تفصیلات کے مطابق گوجرانوالہ میں ایک سفاک شخص کو اپنے چھ ماہ کے بیٹے کو قتل کرنے پر گرفتار کیا گیا۔ پولیس نے بتایا کہ ملزم آکاش نشے کا عادی ہے اس نے بیٹے کو کنگنی والا کے قریب نہر میں پھینکا تھا۔ پولیس نے کہا کہ ملزم نے اپنے جُرم کا اعتراف بھی کر لیا ہے۔

ملزم نے اعترافی بیان میں بتایا کہ وہ بچے کو گھر سے باہر لے گیا، اسے بچے کے رونے پر غصہ آیا جس پر اس نے بچے کو نہر میں پھینک دیا۔ یاد رہے کہ گذشتہ روز تھانہ اروپ کے علاقے کوٹ اسحاق میں پیش آیا تھا جہاں ملزم کی بیوی نے شوہر پر بیٹے کو بیچنے کا الزام عائد کیا تھا جب کہ بچے کی لاش مرید کے کے قریب نہر سے ملی تھی۔

(جاری ہے)

بچے کی ماں کی جانب سے شوہر پر مقدمہ درج کروایا گیا جس میں خاتون نے الزام عائد کیا تھا کہ اس کے شوہر نے بچے کو فروخت کر دیا ہے۔

بعد ازاں پولیس نے ملزم کو حراست میں لے کر تفتیش کی تو ملزم نے انکشاف کیا کہ اس نے بیوی سے نشے کے لیے پیسے مانگے تھے لیکن پیسے نہ ملنے پر بدلہ لینے کے لیے بچے کو ساتھ لے گیا اور نہر میں پھینک دیا۔ پولیس کو بچے کی لاش نہر سے ملی تو پوليس نے ماں کی مدعیت میں دفعہ 363 کے تحت مقدمہ درج کرکے ملزم آکاش کو گرفتار کیا۔ خاتون نے ایف آئی آر میں مؤقف اپنایا تھا کہ 2 اکتوبر کو شوہر بیٹے کو چیز دلانے کے بہانے ساتھ لے گیا اور کچھ دیر بعد شوہر واپس آیا لیکن اس کے ساتھ بیٹا موجود نہیں تھا۔

بچے کی والدہ کے مطابق خاوند سے بچے کا پوچھا تو وہ ٹال مٹول کرتا رہا، مجھے یقین ہے شوہر نے بیٹے کو فروخت کر دیا کیونکہ یہ نشے کا عادی ہے۔ جوڑے کی 10سال قبل شادی ہوئی تھی جن کی 2 بیٹے اور 3 بیٹیاں ہیں۔

متعلقہ عنوان :

گجرانوالہ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments