اسکائوٹنگ کا مقصد مشکل وقت میں عوام الناس کو رضاکارانہ خدمات فراہم کرنا ہے، کمشنر حیدرآباد

ملک و قوم کو جب بھی اسکائوٹس کی خدمات کی ضرورت پڑی ہے تو انہوں نے بلاتفریق لوگوں کی خدمت کی ہے

اتوار 5 دسمبر 2021 22:40

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 05 دسمبر2021ء) کمشنر حیدرآباد محمد عباس بلوچ نے کہا ہے کہ اسکائوٹنگ کا مقصد مشکل وقت میں عوام الناس کو رضاکارانہ خدمات فراہم کرنا ہے، ملک و قوم کو جب بھی اسکائوٹس کی خدمات کی ضرورت پڑی ہے تو انہوں نے بلاتفریق لوگوں کی خدمت کی ہے، توقع ہے کہ مستقبل میں بھی اسکائوٹس اپنی بلاتفریق سماجی خدمت کا سلسلہ جاری رکھیں گے اس سلسلے میں انتظامیہ کی طرف سے ان سے ہر ممکن تعاون کیا جائے یگا۔

ڈگری کالج لطیف آباد نمبر 11 میں المصطفیٰ اسکائوٹس اوپن گروپ کی طرف سے تقریب تقسیم ایوارڈ میں بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کمشنر محمد عباس بلوچ نے کہا کہ کورونا وائرس سے بچائو کی ویکسینیشن کیلئے رضاکارانہ خدمات کی ضرورت ہے اور اس سلسلے میں اسکائوٹس اپنا بھر پور کردار کریں، انہوں نے کہا کہ اس وقت تک حیدرآباد کی50 فیصد آبادی کی ویکسینیشن کی گئی ہے جبکہ بقیہ لوگوں کی ویکسینیشن کے حوالے سے کوشش کی جا رہی ہے، انہوں نے عوام الناس سے اپیل کی کہ وہ اپنے پیاروں کی ویکسینیشن ضرور کروائیں تاکہ اس وباء کے نقصانات کو کم سے کم کیا جا سکے، انہوں نے عوام الناس کو مشورہ دیا کہ میکرون ویرینٹ کے خدشے کے پیش نظر 50 سال سے زائد عمر والے افراد اور کسی بھی قسم کی مستقل بیماری میں مبتلا افراد فائزر بوسٹر ضرور لگوائیں اور انہیں وائرس کا شکار ہونے سے بچائیں۔

(جاری ہے)

تقریب میں ڈائریکٹر ایجوکیشن سید رسول بخش شاہ، ڈی ایچ او حیدرآباد ڈاکٹر لالا جعفر اسکائوٹس کے سید اختر میر ، اسسٹنٹ کمشنر تعلقہ لطیف آباد محمد فہد میر، اے ایس پی حسنین و دیگر متعلقہ افسران سمیت المصطفیٰ اسکائوٹ کے رضا کار و دیگر نے بھی خطاب کیا اور حیدرآباد میں اسکائوٹس کی کارکردگی اور رضا کارانہ خدمات پر روشنی ڈالی، انہوں نے کہا کہ اوپن اسکائوٹس گروپس کے فعال ہونے سے معاشرے کو رضاکارانہ خدمات کی فراہمی میں آسانی ہوگی، بعد ازاں کمشنر محمد عباس بلوچ نے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے اسکائوٹس میں ایوارڈ تقسیم کئے، تقریب اسکائوٹس کے علاوہ دیگر معززین بھی موجود تھے۔

متعلقہ عنوان :

حیدرآباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments