پاورہائوسز میں نجی سی ای او کی تعیناتی نجکاری کی شروعات ہے ،عبداللطیف نظامانی

جمعہ اگست 23:38

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 23 اگست2019ء) واپڈا کے ماتحت پاور ہائوسوں میں نجی چیف ایگزیکٹو آفیسر کی تعیناتی ادارے اور ملازمین کے خاتمے اور ادارے کو نجکاری کی جانب لے جانے کی شروعات ہے واپڈا سی بی اے یونین اس مزدور اور ادارہ دشمن منصوبے کے سخت خلاف ہے اور اس عمل کی مخالفت کرے گی اس سلسلے میں یونین کا مرکزی اجلاس 5ستمبرکو لاہور میں منعقد ہوگا۔

جس میں ملک بھر کے تمام پاور ہائوسوں کے نمائندگان شرکت کرکے آئندہ کا لائحہ عمل ترتیب دینگے۔ ان خیالات کا اظہار آل پاکستان واپڈا ہائیڈرو الیکٹرک ورکرز یونین سی بی اے کے مرکزی صدر عبداللطیف نظامانی نے لیبر ھال حیدرآباد میں سندھ کے تمام واپڈا پاور ہائوسسز گڈو، جامشورو، لاکھڑا ، کوٹری پاور ہائوسسز کے نمائندگان کے ایک ہنگامی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔

(جاری ہے)

اس موقع پر پاور ہائوسوں کے ریجنل عہدیداران شمس الدین سولنگی ، عباس چانڈیو، نوید عباسی ،غلام رسول ڈیتھو، حافظ عبدالستار، امام بخش کے علاوہ یونین کے صوبائی سیکریٹری اقبال احمد خان، ملک سلطان علی، اعظم خان اور محمد حنیف خان بھی موجود تھے۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے قائد مزدور عبداللطیف نظامانی نے مزید کہا کہ یونین سمجھتی ہے کہ اداروں میں نجی چیف ایگزیکٹو آفیسر لگانے کا مقصد سیاسی لوگوں کو نواز نہ ہے اور انکو سیڑھی بناکر آگے چل کر ادارے اور ملازمین کو مستقل نجی شعبے میں دینے کی ابتداء ہے حکومت اور انتظامیہ کا یہ عمل کسی طور بھی ملک ادارے اور محنت کشوں کے مفاد میں نہیں ہے کیونکہ نجی آفیسر لگانے سے ایک تو ادارے پر مالی بوجھ مزید بڑھ جائیگا۔

دوئم ادارے کے افسران کی ترقیاں رک جائینگی نجی آفیسر اپنی نہ تجربہ کاری اور غلط حکمت عملی کے باعث مزید ادارے کو تباہی کی جانب لے جائے گا اور ادارے کو مکمل نجی تحویل میں دینے میں معاونت کریگا۔ لہذا یونین نے پاور ہائوسسز کے نمائندگان کی گزارشات کی روشنی میں فیصلہ کیاہے کہ واپڈا کے تمام ملک گیر پاور ہائوسسز کا ایک نمائندہ اجلاس 5ستمبر کو لاہور میں بلایا جائے اور اس میں اس حوالے سے آئندہ کیلئے لائحہ عمل ترتیب دیا جائے اور اس عمل کے خلاف ملک گیر سطح پر مذمتی پروگرام کو مرتب کرنے کیلئے کاروائی کو فائنل کیا جائے ۔ اجلاس سے تمام پاور ہائوسسز کے ریجنل چیئرمین اور یونین کے صوبائی سیکریٹری اقبال احمد خان نے بھی خطاب کیا اور اپنی اپنی آراء سے آگا ہ کیا۔

حیدرآباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments