اُردو پوائنٹ پاکستان اسلام آباداسلام آباد کی خبریںضمنی انتخاب بتا رہا ہے کہ آںے والا وقت کس طرح کا ہے اب ڈالر اور مہنگائی ..

ضمنی انتخاب بتا رہا ہے کہ آںے والا وقت کس طرح کا ہے

اب ڈالر اور مہنگائی کے حالات عوام نے دیکھ لیے ہیں، پہلے 60 دنوں میں ضمنی انتخابات کا اس طرح کا نتیجہ پہلی مرتبہ آیا ہے۔ سابق وزیراعظم نواز شریف کی میڈیا سے گفتگو

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 15 اکتوبر 2018ء): سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ ن لیگ انتقامی کارروائیاں بھگت رہی ہے۔ ضمنی انتخاب میں اظہار اعتماد پر عوام کا شکرگزار ہوں۔ ضمنی انتخاب کے نتیجے سے اندازہ ہو گیا ہے کہ آنے والا وقت کیسا ہو گا۔ احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سابق وزیراعظم نواز شریف نے کہا کہ ضمنی انتخاب میں عوام نے ہم پر بھرپور اعتماد کا اظہار کیا ہے۔

اب ڈالر اور مہنگائی کے حالات عوام نے دیکھ لیے ہیں، پہلے 60 دنوں میں ضمنی انتخابات کا اس طرح کا نتیجہ پہلی مرتبہ آیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ راولپنڈی کی نشست بھی ایسی ہی ہے کہ جیسے ہم نے جیتی ہے۔ میں نے محبت اور جانفشانی سے بطور وزیراعظم اپنا فرض ادا کیا جس کا عجیب صلہ مل رہا ہے۔

(خبر جاری ہے)

میں جیل سے رہا ہوا تو شہباز شریف کو جیل میں ڈال دیا گیا۔ جب ہماری حکومت تھی تو دل لگا کر اور محنت سے کام کیا۔

عوام حالات دیکھ رہے ہیں اور ہمیں دوبارہ لے کر آئیں گے۔ضمنی انتخاب میں ہماری توقعات سے بڑھ کر نشستیں ملیں۔ چار سال میں ڈالر کی قیمت نہیں بڑھی تھی لیکن گذشتہ 55 دنوں میں عوام نے ڈالر کی قیمت میں اضافہ دیکھ لیا ہے۔انشا ء اللہ اب بہت جلد حالات بدل جائیں گے۔ اللہ کے فضل سے یہ سارے حالات بدل جائیں گے۔ ہمارے زمانے میں لوگ خوش تھے کہ مہنگائی نہیں ہے۔

ضمنی انتخاب میں غریب لوگ مطمئن تھے ، انہی کی دعاؤں کی وجہ سے مسلم لیگ ن ضمنی انتخاب میں کامیاب ہوئی۔ لیکن آج مہنگائی میں اضافہ ہو رہا ہے۔ضمنی انتخاب کا نتائج دیکھ کر اندازہ ہو رہا ہے کہ آنے والا وقت کیسا ہو گا۔ واضح رہے کہ ملک بھرمیں گذشتہ روز ضمنی انتخاب کے لیے پولنگ ہوگئی جس کے بعد غیر سرکاری غیر حتمی نتائج آنے کا سلسلہ آنا شروع ہوا۔

اب تک سامنے آنے والے غیر سرکاری غیر حتمی نتائج کے مطابق پاکستان تحریک انصاف اور مسلم لیگ ن قومی اسمبلی کی 4، 4 جبکہ مسلم لیگ ق قومی اسمبلی کی دو نشستوں پر کامیاب ہوئی۔ این اے 53 اسلام آباد سے پاکستان تحریک انصاف کے اُمیدوار علی نواز اعوان،راولپنڈی کے این اے 60 پر پاکستان تحریک انصاف کےاُمیدوار شیخ راشد،این اے 63 راولپنڈی سے پاکستان تحریک انصاف کے اُمیدوار منصور حیات خان اور این اے 243 کراچی سے پاکستان تحریک انصاف کےاُمیدوار عالمگیر خان کامیاب ہوئے۔

این اے 56 اٹک میں مسلم لیگ ن کے اُمیدوار سہیل خان،این اے 103 فیصل آباد سے مسلم لیگ ن کے اُمیدوار علی گوہر خان،لاہور کے حلقہ 124 میں مسلم لیگ ن کے اُمیدوار شاہد خاقان عباسی اور این اے 131 لاہور میں مسلم لیگ ن کے اُمیدوار خواجہ سعد رفیق کامیاب ہوئے۔این اے 65 چکوال میں مسلم لیگ ق کے اُمیدوار چوہدری سالک حسین اور این اے 69 گجرات میں مسلم لیگ ق کےاُمیدوار مونس الہیٰ کامیاب ہوئے۔

اس کے علاوہ پنجاب اسمبلی میں ہونے والے ضمنی انتخاب میں مسلم لیگ ن نے 6،پاکستان تحریک انصاف نے 5 اور 2 آزاد اُمیدواروں نے کامیابی حاصل کی۔سندھ اسمبلی کی دونوں نشستوں پر پاکستان پیپلز پارٹی نے کامیابی حاصل کی جبکہ خیبرپختونخواہ اسمبلی میں پاکستان تحریک انصاف نے 9 میں سے 6 نشستیں حاصل کیں جبکہ عوامی نیشنل پارٹی نے 2 اور مسلم لیگ ن نے ایک نشست حاصل کی۔ بلوچستان اسمبلی میں بلوچستان نیشنل پارٹی (بی این پی) نے ایک اور ایک آزاد اُمیدوار نے کامیابی حاصل کی۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

اسلام آباد شہر کی مزید خبریں