اُردو پوائنٹ پاکستان اسلام آباداسلام آباد کی خبریںوفاقی وزیر برائے امور کشمیر اور گلگت بلتستان علی امین خان گنڈ ا پور ..

وفاقی وزیر برائے امور کشمیر اور گلگت بلتستان علی امین خان گنڈ ا پور سے آزاد جموں وکشمیر کے صدر سردار مسعود خان کی ملاقا ت اور وزارت کی مبارکباد

دونوں رہنمائوں کا مقبوضہ جموں وکشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی مجموعی صورتحال سمیت بھارتی فوج کے جرائم اور بے گناہ کشمیریوں پر مظالم پر تبادلہ خیال

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 اکتوبر2018ء) آزاد جموں وکشمیر کے صدر سردار مسعود خان نے وفاقی وزیر برائے امور کشمیر اور گلگت بلتستان علی امین خان گنڈ ا پور سے ملاقا ت کر کے انہیں وفاقی کابینہ میں نئی ذمہ داریاں سنبھالنے پر مبارکباد دی۔ صدر سردار مسعود خان اور وفاقی وزیر امور کشمیر نے مقبوضہ جموں وکشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی مجموعی صورتحال سمیت بھارتی فوج کے ہاتھوں بے گناہ کشمیری عوام کے قتل و غارت ، غیر قانونی حراستوں سمیت انسانیت کے خلاف دیگر جرائم پر تبادلہ خیال کیا ۔

صدارتی سیکرٹریٹ کی جانب سے جاری بیان کے مطابق صدر سردار مسعود خان نے ملاقات کے دوران صدر پاکستان ڈاکٹر عارف علوی ، وزیر اعظم عمران خان اور وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی طرف سے مسئلہ کشمیر پر جاندار اور دو ٹوک موقف اختیار کرنے، کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی اور بھارتی حکومت سے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں فوری طور پر بند کرنے کا مطالبہ کرنے پر ان کا شکریہ ادا کیا۔

(خبر جاری ہے)

صدر سردار مسعود خان نے اس توقع کا اظہار کیا کہ حکومت پاکستان ریاست جموں وکشمیر کے عوام کی جائز ، منصفانہ اور بین الاقوامی اصولوں اور قوانین کے مطابق جاری جدوجہد کی حمایت جاری رکھے گی۔ صدر آزادکشمیر نے وفاقی وزیر امور کشمیر سے چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت منصوبوں پر بھی تبادلہ خیال کیا اور سی پیک کے تحت مجوزہ مانسہرہ-مظفرآباد، میر پور شاہراہ کے منصوبے کی بحالی اور لیپہ ٹنل کے فنڈز کی بحالی کا بھی مطالبہ کیا۔

انہوں نے وفاقی وزیر کو بتایا کہ لیپہ ٹنل کا منصوبہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے کیونکہ اس ٹنل کی تعمیر سے لیپہ کو آزادکشمیر کے دیگر حصوں سے ملانے کا راستہ ہموار ہونے کے ساتھ ساتھ وادی میں سیاحت کے فروغ میں زبردست مدد ملے گی۔ صدر آزادکشمیر نے وفاقی وزیر سے نیلم جہلم پن بجلی منصوبے اور دریائے نیلم کے پانی کا رخ موڑنے کے نتیجہ میں پیدا ہونے والے ماحولیاتی مسائل پر بھی تبادلہ خیال کیا۔

۔ صدر آزادکشمیر نے وفاقی حکومت کی جانب سے میر پور میں ائیر پورٹ تعمیر کرنے کے فیصلے کا بھی زبردست خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ مظفرآباد اور راولاکوٹ کے ہوائی اڈوں میں توسیع کر کے انہیں بھی قابل استعمال بنایا جائے۔ صدر آزاد کشمیر اور وفاقی وزیر امور کشمیر نے آزادجموں وکشمیر کے عبوری آئین ایکٹ 1974ء میں تیرہویں ترمیم پر بھی تبادلہ خیال کیا۔

اور اس بات پر زور دیا کہ کہ تمام اسٹیک ہولڈرز آزادکشمیر کو انتظامی اور مالی اختیار دینے کے مطالبہ کو سامنے رکھتے ہوئے اتفاق رائے سے متعلقہ امور طے کریں۔ گلگت بلتستان کے بارے میں بات چیت کرتے ہوئے صدر آزادکشمیر نے کہا کہ آزادکشمیر کے عوام گلگت بلتستان کو ریاست جموں وکشمیر کا حصہ سمجھتے ہیں۔ تاہم وفاقی حکومت اس علاقے کے مستقبل کا فیصلہ کرتے وقت اقوام متحدہ میں ریاست جموں وکشمیر کے بارے میں پاکستان کے موقف کو سامنے رکھنے کے علاوہ آزادکشمیر کی سیاسی جماعتوں اور مقبوضہ جموں وکشمیر کے عوام کے نمائندوں کو بھی اعتماد میں لے۔

دریں اثناء صدر آزاد جموں وکشمیر سردار مسعود خان سے جموں وکشمیر تحریک حق خودارادیت یورپ کے چیئرمین راجہ نجابت حسین ، فدا حسین کیانی اور معروف تاریخ دان اور صحافی سردار اسحاق خان نے بھی علیحدہ علیحدہ ملاقاتیں کیں۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

اسلام آباد شہر کی مزید خبریں