اُردو پوائنٹ پاکستان اسلام آباداسلام آباد کی خبریںنواز شریف نے آصف زرداری سے متعلق سوال کا رخ مریم اورنگزیب کی طرف موڑ ..

نواز شریف نے آصف زرداری سے متعلق سوال کا رخ مریم اورنگزیب کی طرف موڑ دیا

آصف علی زرداری ملاقات کے لیے تیار ہیں تو کیا آپ بھی تیار ہیں؟ صحافی کا سابق وزیراعظم نواز شریف سے سوال

اسلام آباد(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین 23 اکتوبر۔2018ء)احتساب عدالت میں سابق وزیراعظم نواز شریف کے خلاف فلیگ شپ ریفرنس کیس کی سماعت جاری ہے. نوازشریف کے خلاف فلیگ شپ ریفرنس کی سماعت احتساب عدالت کے جج محمد ارشد ملک کررہے ہیں. سابق وزیراعظم نوازشریف آج احتساب عدالت میں پیش ہوئے تو اس موقع پر ایک صحافی نے نواز شریف سے سوال کیا کہ آصف علی زرداری ملاقات کے لیے تیار ہیں تو کیا آپ بھی تیار ہیں؟۔

تو نواز شریف صحافیوں کے سوال سے کترانے لگ گئے اور صحافی کے سوال کا رخ مریم اورنگزیب کی طرف موڑ دیا۔پاکستان مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب نے میاں نواز شریف کی جگہ صحافی کو جواب دیا کہ حکومت کی نااہلی برقراررہی تو سیاسی منظر نامہ تبدیل ہوگا.مریم اورنگزیب نے جواب دیا کہ آصف زرداری کے بیان کا پارٹی سطح پر جائزہ لے رہے ہیں.نواز شریف کے آصف علی زرداری سے متعلق سوال کا جواب نہ دینے سے یہ بات واضح ہوتی ہے کہ نواز شریف بھی آصف علی زرداری کی طرح جواب دینے سے کترا رہے ہیں۔

(خبر جاری ہے)

تاہم حقیقت یہ ہے کہ دونوں جماعتوں میں رابطے جاری ہے۔آصف علی زرداری اور نواز شریف کے درمیان بھی برف پگھلنے لگ گئی ہے جس نے حکومت کے لیے بھی خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے۔خیال رہے گذشتہ روز بتایا گیا کہ مولانا فضل الرحمن ایک بار پھر اپوزیشن جماعتوں کا گرینڈ الائنس بنانے کے لئے سرگرم عمل ہوگئے ہیں۔ مسلم لیگ ن کے قائد میاں نوازشریف اور پیپلزپارٹی پارلیمنٹرین کے صدرآ صف علی زرداری کے درمیان ملاقات کرانے کی کوشش کر رہے ہیں جو اپوزیشن جماعتوں کے آئندہ چند دنوں میں ہونے والے اجلاس میں ہونے کا امکان ہے۔


اس سلسلے میں اہم ترین پیش رفت سامنے آئی۔سابق صدر آصف زرداری مولانا فضل الرحمان سے ملاقات کرنے انکی رہائش گاہ پر پہنچے۔۔اس موقع پر پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنما نئیر بخاری اور سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف بھی آصف زرداری کے ہمراہ تھے۔س ملاقات میں ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا اور مستقبل کے لائحہ عمل کے حوالے سے بات چیت ہوئی۔


اس ملاقات کے بعد دونوں رہنماوں نے میڈیا سے بات چیت کی۔اس موقع پر سابق صدر آصف زرداری کا کہنا تھا کہ سب دوستوں کے ساتھ مل کرعدم اعتماد کی بات کی جاسکتی ہے۔مقصد حکومت گرانا نہیں ہے بلکہ جمہوریت کوبچانا ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومت سے ڈیل کرنے کے لیے مشرف کا دور بہتر تھا۔گزشتہ سالوں میں پہلی بارجمہوری قوتیں کمزرورہوئی ہیں۔اختلاف کرنا بھی جمہوریت کی خوبصورتی ہے

اپنی رائے کا اظہار کریں -

اسلام آباد شہر کی مزید خبریں