وفاقی دارالحکومت میں لینڈ مافیا بالکل برداشت نہیں کیا جائے گا،

غریبوں کی زمینوں پر ناجائز قبضے کرنے والوں اور لینڈ مافیا کے خلاف آپریشن عوام اور میڈیا کو ساتھ لے کر آگے بڑھایا جائے وزیرِ اعظم عمران خان کا وفاقی دارالحکومت کے متعلقہ ایشوز کے حوالے سے اعلیٰ سطح کا اجلاس سے خطاب

پیر نومبر 16:39

وفاقی دارالحکومت میں لینڈ مافیا بالکل برداشت نہیں کیا جائے گا،
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 نومبر2018ء) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ وفاقی دارالحکومت میں لینڈ مافیا بالکل برداشت نہیں کیا جائے گا، غریبوں کی زمینوں پر ناجائز قبضے کرنے والوں اور لینڈ مافیا کے خلاف آپریشن عوام اور میڈیا کو ساتھ لے کر آگے بڑھایا جائے جبکہ وزیراعظم نے اسلام آباد میں لینڈ مافیا، ڈرگ ڈیلرز اور خصوصا ً تعلیمی اداروں میں منشیات کے استعمال کے خلاف جاری مہم کو مزید منظم کرنے اور اسے موثر بنانے کے لئے کوآڈینیشن کمیٹی کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیرِ اعظم عمران خان کی زیرِصدرات وفاقی دارالحکومت کے متعلقہ ایشوز کے حوالے سے اعلیٰ سطح کا اجلاس پیر کو منعقد ہوا۔ اجلاس میں وزیرِ مملکت برائے داخلہ شہریار خان آفریدی، وزیراعظم کے معاون خصوصی علی نواز اعوان، ایم این اے راجہ خرم نواز، سیکرٹری داخلہ میجر (ر) اعظم سلیمان، چیف کمشنر اسلام آباد، آئی جی پولیس و دیگر سینئر افسران شریک ہوئے۔

(جاری ہے)

سیکرٹری داخلہ نے وزیرِ اعظم عمران خان کو وفاقی دارالحکومت کی مجموعی صورتحال، امن و امان، قبضہ مافیا کے خلاف جاری آپریشن و دیگر امور پر تفصیلی بریفننگ دی۔ وزیرِ اعظم عمران خان نے وزیرِ مملکت شہریار آفریدی، معاون خصوصی علی نواز اعوان اور ایم این اے راجہ خرم نواز کو اسلام آباد کیلئے خصوصی پیکج تیار کرنے کی ہدایت کی جبکہ اسلام آباد میں لینڈ مافیا، ڈرگ ڈیلرز اور خصوصا ً تعلیمی اداروں میں منشیات کے استعمال کے خلاف جاری مہم کو مزید منظم کرنے اور اسے موثر بنانے کے لئے سیکرٹری داخلہ کی سربراہی میں کوآڈینیشن کمیٹی کے قیام کا فیصلہ کیا گیا اور وزیرِ اعظم کے معاون خصوصی علی نواز اعوان اور ایم این اے راجہ خرم نواز کمیٹی کی رہنمائی کے فرائض سرانجام دیں گے۔

اسلام آباد پولیس کی کارکردگی کو مزید بہتر اور موثر بنانے کے لئے آئی جی اسلام آباد سے سفارشات طلب کر لی گئیں۔ اس موقع پر وزیراعظم نے کہا کہ اسلام آباد اور اس کے مضافات میں غریبوں کی زمینیں ہتھیانے اور ان پر ناجائز قبضہ کرنے والوں کے خلاف کسی قسم کی رعایت نہیں برتی جائے گی۔ وزیراعظم نے وفاقی دارالحکومت کو ماڈل سٹی بنانے اور اس میں بلا تفریق و امتیاز قانون کی حکمرانی کو یقینی بنانے کے لئے پولیس، اسلام آباد انتظامیہ و دیگر اداروں کو ہر ممکنہ سپورٹ فراہم کرنے کی یقین دہانی کرائی۔

وزیراعظم نے کہا کہ وفاقی دارالحکومت میں لینڈ مافیا بالکل برداشت نہیں کروں گا، بدقسمتی سے ملک میں طبقاتی قانون کا رواج ہے جہاں بااثر لوگوں کے جرائم سے چشم پوشی جبکہ غریب غرباء کو سزا دی جاتی ہے۔ انہوں نے کہاکہ تحریک انصاف کی حکومت اس روایت کوبدلنے کے لئے پرعزم ہے۔ وزیرِ اعظم نے ہدایت کی کہ غریبوں کی زمینوں پر ناجائز قبضے کرنے والوں اور لینڈ مافیا کے خلاف آپریشن عوام اور میڈیا کو ساتھ لے کر آگے بڑھایا جائے۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments