افریقی ملکوں کے ساتھ تعلقات میں تیزی سے اضافہ موجودہ حکومت کی خارجہ پالیسی کا اہم ستون ہے

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا افریقی گروپ کے ہائی کمشنرز اور سفیروں کے مشترکہ اجلاس کے دوران اظہار خیال

جمعرات نومبر 16:26

افریقی ملکوں کے ساتھ تعلقات میں تیزی سے اضافہ موجودہ حکومت کی خارجہ ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 نومبر2018ء) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے براعظم افریقہ کے ساتھ قریبی تجارتی، کمرشل اور سرمایہ کاری تعلقات کو بڑھانے کے حکومتی وژن کو اجاگر کرتے ہوئے کہا ہے کہ افریقی ملکوں کے ساتھ تعلقات میں تیزی سے اضافہ موجودہ حکومت کی خارجہ پالیسی کا اہم ستون ہے۔ یہ بات انہوں نے گزشتہ روز دفتر خارجہ میں افریقی گروپ کے ہائی کمشنرز اور سفیروں کے مشترکہ اجلاس کے دوران اظہار خیال کرتے ہوئے کہی۔

(جاری ہے)

دفتر خارجہ کے ترجمان کے مطابق جنوبی افریقہ، تیونس، کینیا، الجیریا، صومالیہ، سوڈان، مراکش، ماریشیس، نائیجیریا، مصر اور لیبیا کے سفیروں اور ہائی کمشنرز نے وزیر خارجہ کے ساتھ طویل اور تفصیلی بات چیت کا موقع فراہم کرنے پر شکرایہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان خطہ کا اہم ملک ہے جبکہ پاکستان اور افریقی ملکوں کے درمیان تعلقات باہمی عزت و احترام کی بنیادوں پر استوار ہیں۔ سفیروں نے کہا کہ دوطرفہ تعلقات میں تیزی سے اضافہ کیلئے اعلیٰ سطح اور کاروباری وفود کے تبادلوں کی ضرورت ہے۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ دوطرفہ خوشگوار تعلقات کو تجارتی، اقتصادی اور سرمایہ کاری تعلقات میں تبدیل کرنے اور مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے کیلئے ہر ممکن کوششیں جاری رکھیں گے۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments