بنیادی سروس انفراسٹرکچر کے ڈھانچے میں اصلاحات کرکے این ایچ اے کو رول ماڈل ادارے کے طور پر پہچان دیں گے، ڈاکٹر عشرت حسین

اداروں میں بہتر گڈ گورننس کا قیام اور پبلک سیکٹر میں ڈلیوری سسٹم بہتر کرکے حقیقی ثمرات عوام کا تک پہنچانا حکومت کا عزم ہے، چیئرمین سروسزاصلاحات ٹاسک فورس

جمعہ نومبر 20:09

بنیادی سروس انفراسٹرکچر کے ڈھانچے میں اصلاحات کرکے این ایچ اے کو رول ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2018ء) سروسزاصلاحات ٹاسک فورس کے چیئرمین ڈاکٹر عشرت حسین نے کہا کہ بنیادی سروس انفراسٹرکچر کے ڈھانچے میں اصلاحات کرکے این ایچ اے کو ایک رول ماڈل ادارے کے طور پر پہچان دیں گے۔روایتی پے اسکیلز ،پروموشن رولز،سنیارٹی لسٹ اور ACRs کا خاتمہ اصلاحات کا اہم جزو ہے۔اداروں میں بہتر گڈ گورننس کا قیام اور پبلک سیکٹر میں ڈلیوری سسٹم بہتر کرکے حقیقی ثمرات عوام کا تک پہنچانا حکومت کا عزم ہے۔

ان خیالات کااظہار انہوں نے نیشنل ہائی وے اتھارٹی اسلام آباد میں سروسز اصلاحات کے بارے میں این ایچ اے اعلی افسران اور جملہ ملازمین کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ وفاقی سیکرٹری مواصلات شعیب احمد صدیقی اورچیئرمین نیشنل ہائی وے اتھارٹی جواد رفیق ملک نے خیر مقدمی کلمات میں این ایچ اے کے موجودہ سروس ڈھانچے سے متعلق بریف کیا اورمشکلات سمیت کارکردگی کے معیار کے بارے میں آگاہی دی۔

(جاری ہے)

اس موقع پر ممبر پلاننگ این ایچ اے عاصم امین ،جنرل منیجراین ایچ اے اکرام الثقلین حیدر اور دیگر افسران نے موجودہ سروس رولز اور ناانصافیوں سے متعلق اپنا اپنا انفرادی تجربہ اورنقطہ نظر بیان کیا۔ڈاکٹر عشرت حسین نے مزید کہا کہ وزیر اعظم پاکستان عمران خان کا عزم ہے کہ اپنے قومی اداروں میں کرپشن کا خاتمہ کرکے انصاف پسندی کے تقاضوں کے مطابق اصلاحات رائج کی جائیں ،جس سے پاکستان کے سافٹ امیج اور خصوصاً ڈلیوری سسٹم اور حقیقی مسائل کی نشاندہی یقینی بن سکے۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت اور ٹاسک فورس حکومتی اداروں کے ملازمین کے مابین مکالمے کے کلچر کو فروغ دے رہی ہے تاکہ اسٹیک ہولڈرزہی اپنے اپنے اداروں کیلئے روشن مستقبل کاتعین اور اپنی اپنی ملازمتوںکی سطح پر سروس کیریئرز کے معیارکو اجاگر کرسکیں۔انہوں نے مزید کہا کہ حکومت سروسز اصلاحات کے حوالے سے نئے پاکستان کی بنیاد کی راہ ہموار کر رہی ہے۔بیوروکریٹک چینل کا جائزہ اورمفاد عامہ کے اداروں کی کارکردگی ہی سروسز ٹاسک فورس کا مینڈیٹ ہے۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments