ق* چیف کمشنر اسلام آباد میں کوآپریٹو ڈپارٹمنٹ کو مزید بااختیار بنانے کا فیصلہ

[ڈپٹی کمشنر سے رجسٹرار کا عہدہ واپس لیا جائیگا

اتوار اپریل 20:01

ڑ*اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - آن لائن۔ 21 اپریل2019ء) چیف کمشنر اسلام آباد میں کوآپریٹو ڈپارٹمنٹ اسلام آباد کو مزید بااختیار بنانے کا فیصلہ کیا ہے ‘ ابتدائی طور پر از خود سیکرٹری کوآپریٹو کے عہدے سے دستبردار ہوں گے اور ڈپٹی کمشنر اسلام آباد سے بھی رجسٹرار کا عہدہ واپس لیا جائے گا۔ ذرائع کے مطابق چیف کمشنر اسلام آباد عامر علی احمد نے ڈپٹی کمشنر اسلام آباد حمزہ شفقات کو ہدایت کی ہے کہ وہ کوآپریٹو ڈیپارٹمنٹ میں اصلاحات کا آغاز کرتے ہوئے اسے مزید اختیار دینے کیلئے قانون سازی کا آغاز کریں اور سرکل رجسٹرار کو مزید بااختیار بنائیں۔

اس حوالے سے چیف کمشنر اسلام آباد نے چیف کمشنر آفس میں تعینات دو سینئر افسران ایڈمن اور ڈائریکٹر فنانس کی سربراہی میں اصلاحات کمیٹی بنانے کا فیصلہ کیا ہے کمیٹی میں ایک ڈپٹی کمشنر ‘ اسسٹنٹ کمشنر ‘ سرکل رجسٹرار اور لاء ونگ کا سینئر آفیسر شامل ہوگا۔

(جاری ہے)

مذکورہ کمیٹی ایک ماہ کے اندر اپنی سفارشات چیف کمشنر اسلام آباد کو بھجوائے گی۔ جس کے بعد سرکل رجسٹرار دو اسسٹنٹ سرکل اسسٹنٹ رجسٹرار اور چار انسپکٹر سمیت تیس کے قریب افسران اور ملازمین کو اشتہار کے ذریعے بھرتی کیا جائے گا۔

اس حوالے سے چیف کمشنر اسلام آباد عامر علی احمد نے بتایا کہ کوآپریٹو ڈیپارٹمنٹ ایک مکمل شعبہ ہے جہاں پر اضافی چارج والے افسران بیٹھے ہوتے ہیں جس سے عوام کے مسائل حل نہیں ہوتے اس لئے ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ کوآپریٹو ڈیپارٹمنٹ کو مکمل طور پر ایک الگ ڈیپارٹمنٹ بنا دیا جائے اور اس شعبے کا رجسٹرار ڈپٹی رجسٹرار بھی الگ ہو انہوں نے کہا کہ ڈپٹی کمشنر کے پاس بہت زیادہ کام ہوتا ہے جس کی وجہ سے وہ رجسٹرار کے عہدے پر کام نہیں کرتا تھا۔

اس لئے یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ کوآپریٹو ڈیپارٹمنٹ کو الگ کیا جائے۔(عابد شاہ/اعجاز چیمہ) *** 21-04-19/--56 #/h# ا* کولمبو یکے بعد دیگرے 6دھماکوں سے گونج اٹھا‘154ہلاک‘200سے زائد زخمی ۵دھماکے 3گرجا گھروں اور 2ہوٹلوں میں ہوئے‘جہاں لوگو ایسٹر تہوار پر مذہبی رسومات کی ادائیگی میں مصروف تھے‘حکام ٴْدارالحکومت کے تمام ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ‘حکام کا ہلاکتوں کی تعداد میں اضافے کا خدشہ ئ*صدر میتھری پالا سری سینا کی شدید مذمت‘ملوث افراد کو منطقی انجام تک پہنچانے کا حکم زخمیوں میں 4پاکستانی بھی شامل،جنہیں ابتدائی طبی امداد کے بعد دسچار ج کر دیا گیا ‘ترجمان دفتر خارجہ gسیکورٹی فورسز کا متاثرہ علاقوں میں سرچ آپریشن شروع Iکولمبو(آن لائن)سری لنکا میں ایسٹر کے موقع پر 3گرجا گھروں اور 2ہوٹلوں میں یکے بعد دیگرے 6دھماکوں کے نتیجے میں 154افراد ہلاک جبکہ 200سے زائد زخمی ہو گئے ہیں‘زخمیوں کو فوری طور پر ہسپتال منتقل کر دیا گیا ‘دھماکوں کے بعد سیکورٹی فورسز نے متاثرہ علاقوں کو گھیر ے میں لے کر سرچ آپریشن شروع کر دیا جبکہ صدر سری لنکا میتھری پالا سری سینا نے دہشتگردوں حملوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ سری لنکا میں دہشت گردوں کیلئے کوئی جگہ نہیں‘حملوں میں ملوث عناصر کو منطقی انجام تک پہنچایا جائے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق اتوار کے روز سری لنکا کے دارالحکومت کولمبو میں 3گرجا گھروں اور 2ہوٹلوں میں اس وقت یکے بعد دیگرے 6دھماکے ہوئے‘جس کے نتیجے میں 154افراد ہلاک جبکہ 200 سے زائد افراد زخمی ہو گئے۔پولیس کے مطابق دھماکے اس وقت ہوئے جب عیسائی برادری مذہبی رسومات کی ادائیگی کیلئے گرجا گھروں میں موجود تھی‘حکام نے مزید ہلاکتوں کا خدشہ بھی ظاہر کیا ہے ۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق کارروائی میں کوچیکاڈے، سینٹ سیبسٹن اور بیٹیکولا چرچ میں اس وقت دھماکے ہوئے جب لوگ مذہبی عبادت میں مصروف تھے جبکہ کولمبو میں ہی شانگری ہوٹل اور سینیمین گرانڈ میں بھی دھماکے ہوئے ۔سری لنکن اعلیٰ حکام کے مطابق ایک دھماکہ سینٹ اینتھنی چرچ میں ہوا جہاں لوگ بڑی تعداد میں ایسٹر کی دعائیہ تقریبات میں شرکت کیلئے موجود تھے ‘تاہم اسی دوران زور دار دھماکہ ہوا جس کے باعث درجنوں کی افراد میں زخمی ہوئے ہیں جبکہ بڑے پیمانے پر ہلاکتیں بھی ہوئی ہیں ‘تاہم واقعے کے فوری بعد پولیس،انتظامیہ، ریسکیو ایمرجنسی اور سیکورٹی فورسز کی بھاری نفری متاثرہ علاقوں میں پہنچ گئی‘جہاں زخمیوں کو فوری طور پر ابتدائی طبی امداد کیلئے قریبی ہسپتالوں میں منتقل کر دیا گیا جبکہ سیکورٹی فورسز نے متاثرہ علاقوں کو گھیر ے میں لے کر سرچ آپریشن شروع کر دیا ۔

ہسپتال انتظامیہ کے مطابق زخمیوں میں سے متعدد کی حالت انتہائی تشویشناک ہے ،جس سے ہلاکتوں میں مزید اضافے کا بھی خدشہ ہے‘زخمیوں کو بھر پور طبی سہولتیں فراہم کی جارہی ہیں جبکہ دوسری جانب حکومت نے دارالحکومت کے تمام ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کر دی ہے ۔دوسری جانب سری لنکا کے صدر میتھری پالا سری سینا نے دہشتگردوں حملوں کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ سری لنکا میں دہشت گردوں کیلئے کوئی جگہ نہیں‘حملوں میں ملوث عناصر کو منطقی انجام تک پہنچایا جائے ۔

اس کے علاوہ پاکستان سمیت عالمی برادری نے سری لنکا میں دہشت گرد حملوں کی شدید مذمت کی ہے۔پاکستان محکمہ خارجہ کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا کہ زخمیوں میں 4پاکستانی بھی شامل ہیں ،پاکستانی زخمیوں میں 3خواتین اور ایک مرد شامل ہے،جنہیں ابتدائی طبی امداد کے بعد ڈسچار ج کر دیا گیا۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق دہشت گردی پوری دنیا کیلئے ایک لعنت ہے‘جس کے خاتمے کیلئے پوری دنیا کو مشترکہ حکمت عملی مرتب کرنا ہو گی۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق دکھ کی اس گھڑی میں سری لنکا کی حکومت اور عوام کیساتھ کھڑے ہیں ،وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی جلد سری لنکا کا بھی دورہ کریں گے۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments