وزیر اعظم عمران خان امریکہ جانے سے قبل روضہ روسول ﷺ پر حاضری دینا چاہتے تھے اس لیے سعودی عرب گئے: فردوس عاشق اعوان

وزیر اعظم عمران خان نے کشمیریوں کا سفیر بننے کا فیصلہ کیا ہے، جب بھی وہ کسی مشکل کام پر نکلتے تو وہ روضہ رسول ﷺ پرحاضری دیتے ہیں: مشیر اطلاعات

Usman Khadim Kamboh عثمان خادم کمبوہ جمعرات ستمبر 23:29

وزیر اعظم عمران خان امریکہ جانے سے قبل روضہ روسول ﷺ پر حاضری دینا چاہتے ..
اسلام آباد (اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔19 ستمبر2019ء) مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے وزیراعظم کے سعودی عرب جانے کی وجہ بتاتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان امریکہ جانے سے قبل روضہ روسول ﷺ پر حاضری دینا چاہتے تھے اس لیے سعودی عرب گئے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان نے کشمیریوں کا سفیر بننے کا فیصلہ کیا ہے، جب بھی وہ کسی مشکل کام پر نکلتے تو وہ روضہ رسول ﷺ پرحاضری دیتے ہیں اور دعا کرتے ہیں۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ وزیر اعظم نیک کام کرکے آگے بڑھنا چاہتے تھے، وزیر اعظم اقوام متحدہ میں مسئلہ کشمیر کو موثر انداز میں اٹھائیں گے اور وہ اس نیک کام کا آغاز سعودی عرب سے کرنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ مقبوضہ وادی میں کشمیریوں کے ساتھ ظلم ہورہا ہے، مسئلہ کشمیر سعودی شہزادے کی نظروں سے اوجھل نہیں ہوسکتا۔

(جاری ہے)

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ ایران ہمارا ہمسایہ ملک ہے، دوست بدلتے ہیں، ہمسائے نہیں بدلتے، ایران نے بڑا واضح موقف اختیار کیا ہے اس وقت اگر کوئی ملک فرنٹ پر آکر کھڑے ہوے ہیں تو وہ ایرا ن اورترکی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان سمجھتا ہے کہ علاقائی تنازع کا نتیجہ خطے کی بدحالی کی صورت میں نکلے گا، اس لئے پاکستان نے کہا ہے کہ ایران اور سعودی عرب میں جو بھی غلط فہمیاں ہیں ان سے نکلنے کیلئے لائحہ طے کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ وزیر اعظم پاکستان میں میڈیا کے کردار کو مزید فعال اورموثر بنانا چاہتے ہیں۔ دوسری جانب وزیراعظم عمران خان اور سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے درمیان ملاقات ہوئی ہے، جس میں باہمی دلچسپی کے امور اور دوطرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا گیا،وزیراعظم نے سعودی تنصیبات پر حملے کی مذمت کی، عمران خان نے سعودی ولی عہد کو مقبوضہ کشمیر کی تازہ صورتحال سے آگاہ کیا۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments