پاکستان کو گرین اینڈ کلین بنانے کیلئے پر عزم ہیں ، موسمیاتی تبدیلوں سے نمٹنے کیلئے اقدامات کررہے ہیں،عمرا ن خان

دنیاکوموسمیاتی تبدیلی پرفوری ایکشن لینے کی ضرورت ہے اور پاکستان دنیا میں موسمیاتی تبدیلوں سے متاثر ممالک میں 5 ویں نمبر پر ہے، وزیراعظم

جمعرات نومبر 22:16

پاکستان کو گرین اینڈ کلین بنانے کیلئے پر عزم ہیں ، موسمیاتی تبدیلوں ..
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 26 نومبر2020ء) وزیر اعظم عمران خا ن نے کہا ہے کہ پاکستان کو گرین اینڈ کلین بنانے کیلئے پر عزم ہیں ، موسمیاتی تبدیلوں سے نمٹنے کیلئے اقدامات کررہے ہیں۔وزیراعظم عمران خان نے ورلڈ اکنامک فورم کیلئے آرٹیکل میں کہا کہ دنیاکوموسمیاتی تبدیلی پرفوری ایکشن لینے کی ضرورت ہے اور پاکستان دنیا میں موسمیاتی تبدیلوں سے متاثر ممالک میں 5 ویں نمبر پر ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان کو گرین اینڈ کلین بنانے کیلئے پر عزم ہیں ، موسمیاتی تبدیلوں سے نمٹنے کیلئے اربوں درخت لگا کر موسمیاتی تبدیلی کا قدرتی حل تلاش کررہے ہیں۔عمران خان نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلیاں دنیا بھر کے لئے خطرہ ہیں اور کوئی بھی ملک موسمیاتی تبدیلوں کے اثرات سے محفوظ نہیں، پاکستان دنیا بھرمیں موسمیاتی تبدیلوں سے نمٹنے کیلئے کردار ادا کرنے کو تیار ہے۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ بہت سے ترقی یافتہ ممالک کوموسمیاتی تبدیلوں کے منفی اثرات کا سامنا ہے اور پاکستان موسمیاتی تبدیلیوں سے نمٹنے کے لیے اقداما ت کر رہا ہے ، کے پی میں ایک ارب درخت لگائیا ور اب 10ارب درخت لگانے کیلئے پرعزم ہیں ، موسمیاتی تبدیلیوں سے نمٹنے لیے ہمیں سالانہ 7 سے 14ارب ڈالرتک درکار ہیں۔وزیراعظم نے کہا کہ لاک ڈاؤن کے دوران 85 ہزار کوویڈ محفوظ گرین ملازمتیں نکالیں، ملازمتوں میں شجرکاری،فطری ماحول کے تحفظ اورصفائی شامل ہے۔عمران خان نے ڈبلیوای ایف آرٹیکل سے متعلق ملک امین اسلم سے بھی مشاورت کی، ملک امین اسلم نے بھی ورلڈ اکنامک فورم میں پاکستان کے مؤقف کو اجاگر کیا۔

متعلقہ عنوان :

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments