ایڈیشنل آئی جی موٹروے کی گاڑی پر فائرنگ کے ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا

ضلع خیبر کے علاقے لنڈی کوتل میں پولیس نے مکان پر چھاپہ مار کر ملزم محمد بلال کو گرفتارکیا،دوسرے ملزم صلاح الدین کو پشاور کے علاقہ پشتخرہ سے حراست میں لیا گیا

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان جمعہ 17 ستمبر 2021 11:31

ایڈیشنل آئی جی موٹروے کی گاڑی پر فائرنگ کے ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ، اخبار تازہ ترین، 16ستمبر 2021) ایڈیشنل آئی جی موٹروے کی گاڑی پر فائرنگ کے ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ضلع خیبر کے علاقے لنڈی کوتل میں پولیس نے ایک مکان پر چھاپہ مار کر اے آئی جی موٹروے کی گاڑی پر فائرنگ کرنے والے ملزم محمد بلال کو گرفتار کر لیا۔دوسرے ملزم صلاح الدین کو پشاور کے علاقہ پشتخرہ سے حراست میں لیا گیا۔

ملزمان محکمہ انسداد دہشتگردی کے ٹھوویل میں ہیں جہاں ان سے مزید تفتیش جاری ہے۔ملزمان پر ایڈیشنل آئی جی سجاد افضل کی گاڑی پر فائرنگ کا الزام ہے۔قبل ازیں کراچی میں گرفتار ’ویک اینڈ گینگ‘ کے ملزمان کا ایڈیشنل آئی جی موٹروے پر حملے میں ملوث ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔راولپنڈی کے علاقے فتح جنگ میں موٹروے پولیس کے ایڈشنل آئی جی سجاد افضل آفریدی کی گاڑی پر حملہ کرنے والے ملزمان کے کراچی میں گذشتہ سال 26 دسمبر کو گرفتار وائٹ کرولا ’ ویک اینڈ گینگ‘ کے گرفتار ملزنان سے تعلق ظاہر ہو رہا ہے۔

(جاری ہے)

حملہ کیس کی تفتیش کرنے والی ٹیم نے کراچی کی ساؤتھ پولیس سے پشاور سے تعلق رکھنے والے اس خطرناک گینگ کی تمام تفصیلات حاصل کر لیں ہیں۔پیشہ ور اور ماہر ملزمان کا یہ گروہ ملک گیر وارداتوں میں ملوث ہے۔ڈی ایس پی درخشاں زاہد حسین کی سربراہی میں پولیس پارٹی نے وائٹ کرولا کے 4 ملزمان کو گذشتہ سال 26 دسمبر کو ڈیفینس کراچی سے گرفتار کیا تھا۔

ڈی ایس پی زاہد حسین کے مطابق ملزمان کراچی کے 16 بنگلوں میں ڈکیتی کی وارداتوں میں ملوث رہے۔پولیس ذرائع کے مطابق موٹروے حملہ کیس کی تفتیشی ٹیم نے کراچی کی ساؤتھ پولیس سے تمام ریکارڈ حاصل کر لیا ہے اور ان مفرور ملزمان کے خلاف 16 ملاقات کی تفتیشی رپورٹ بھی پنجاب پولیس کو دے د ی گئی ہے۔پولیس ذرائع کے مطابق اس سلسلے میں بھہت جلد بریک تھرو سامنے آنے کی توقع ہے۔

اسلام آباد موٹروے پر حملہ آور ملزمان کی گاڑی سے ملنے والے ڈی وی آر سے ان ملزمان کی مبینہ طور پر شناخت سامنے آئی۔راولپنڈی میں ڈکیتی کے دوران چوری کیا گیا ڈی وی آر دیگر مسروقہ سامنا سمیت حملہ آور ملزمان کی گاڑی سے ملا جب کہ واردات کا نشانہ بننے والے گھر کی سی سی ٹی وی فوٹیج میں ان ملزمان کے چہرے واضح نظر آ رہے ہیں۔واضح رہے کہ راولپنڈی کے قریب نامعلوم ملزمان نے فتح جنگ انٹر چینج پر ایڈیشنل آئی جی موٹروے کی گاڑی پر فائرنگ کی، فائرنگ سے ایڈیشنل آئی جی کے بھائی جاں بحق اور ایڈیشنل آئی جی موٹروے شدید زخمی ہوگئے تھے۔

ترجمان موٹروے پولیس کا کہنا تھا کہ سجاد افضل آفریدی ایم ون پر مشکوک گاڑی کا پیچھا کررہے تھے، کہ ان پر فائرنگ کردی گئی، سجاد افضل کو دو گولیاں لگیں، انہیں پمز ہسپتال منتقل کیا گیا تھا، ایڈیشنل آئی جی سجاد افضل آفریدی کے چھوٹے بھائی اور پی اے ایس افسر نعمان واقعے میں جاں بحق ہوگئے تھے۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments