پن بجلی کے فروغ کیلئے ملکی تاریخ میں پہلی بار گلگت بلتستان پاور پالیسی تشکیل دی جا رہی ہے ،حماد اظہر

ماضی کی حکومتوں نے درآمدی فیول کے منصوبوں پر توجہ مرکوز رکھی ،سال 2030 تک ملکی توانائی میں پن بجلی کا حصہ 29 فیصد سے 43 فیصد تک بڑھایا جائے گا، وزیر توانائی

بدھ 27 اکتوبر 2021 16:05

پن بجلی کے فروغ کیلئے ملکی تاریخ میں پہلی بار گلگت بلتستان پاور پالیسی تشکیل دی جا رہی ہے ،حماد اظہر
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 27 اکتوبر2021ء) وفاقی وزیر توانائی حماد اظہر نے کہا ہے کہ پن بجلی کے فروغ کیلئے ملکی تاریخ میں پہلی بار گلگت بلتستان پاور پالیسی تشکیل دی جا رہی ہے ،ماضی کی حکومتوں نے درآمدی فیول کے منصوبوں پر توجہ مرکوز رکھی ،سال 2030 تک ملکی توانائی میں پن بجلی کا حصہ 29 فیصد سے 43 فیصد تک بڑھایا جائے گا۔

(جاری ہے)

بدھ کو یہاں ہائیڈرو کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان میں پانی سے 64 ہزار میگاواٹ بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت ہے ،اس وقت ملکی توانائی کا 29 فیصد حصہ پانی سے بجلی کی پیداوار کا ہے ۔ انہوںنے کہاکہ ماضی کی حکومتوں نے درآمدی فیول کے منصوبوں پر توجہ مرکوز رکھی ،سال 2030 تک ملکی توانائی میں پن بجلی کا حصہ 29 فیصد سے 43 فیصد تک بڑھایا جائے گا ۔ حماد اظہر نے کہاکہ پن بجلی کے فروغ کیلئے ملکی تاریخ میں پہلی بار گلگت بلتستان پاور پالیسی تشکیل دی جا رہی ہے ۔

متعلقہ عنوان :

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments