اسلم رئیسانی کے علاوہ صوبے کی اہم شخصیات کی جے یو آئی میں شمولیت کا امکان

مولانا فضل الرحمان بلوچستان میں آئندہ حکومت سازی کے لیے متحرک، پارٹی رہنماؤں نے مولانا کو اہم شخصیت کی پارٹی میں شمولیت کے حوالے سے آگاہ کر دیا

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان ہفتہ 22 جنوری 2022 10:32

اسلم رئیسانی کے علاوہ صوبے کی اہم شخصیات کی جے یو آئی میں شمولیت کا امکان
اسلام آباد( اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین ۔ 22 جنوری 2022ء ) جمعیت علماء اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان بلوچستان میں آئندہ حکومت سازی کے لیے متحرک ہوگئے ہیں۔مولانا فضل الرحمان سے مولانا عبدالغفور حیدری،مولانا عبدالواسع،آغا محمود، اکرم درانی،ایم این اے مولانا کماالدین نے ملاقات کی اور صوبے کی متعدد اہم شخصیات سے رابطوں کے سے متعلق آگاہ کیا جو بلوچستان کے سابق وزیر اعلی نواب اسلم رئیسانی کی طرح جمیعت علماء اسلام میں شمولیت کا اعلان کرنے والے ہیں۔

مولانا عبدالغفور حیدری نے کہا ہے کہ جے یو آئی بلوچستان کی بڑی سیاسی جماعت بن گئی ہے اور لوگ نااہل حکمرانوں سے تنگ آ چکے ہیں۔خیال رہے کہ بلوچستان کے سابق وزیراعلیٰ نواب اسلم رئیسانی نے مولانا فضل الرحمن سے ملاقات کرکے جمعیت علمائے اسلام میں شمولیت کی دعوت قبول کر لی ہے۔

(جاری ہے)

اسلم رئیسانی کا کہنا ہے کہ بلوچستان میں آئندہ حکومت جے یو آئی بنائے گی۔

اس موقع پر مولانا فضل الرحمن کا کہنا تھا کہ نواب اسلم رئیسانی کی شمولیت سے جے یو آئی مزید مضبوط ہو گی۔ تفصیلات کے مطابق جے یو آئی کے سربراہ مولانا فضل الرحمان بلوچستان میں آئندہ حکومت سازی کیلئے متحرک ہوگئے ،مولانا فضل الرحمان سے سابق وزیراعلی نواب اسلم رئیسانی نے ملاقات کی جس میں مولانا عبدالغفورحیدری، مولانا عبدالواسع، آغا محمود شاہ، کامران مرتضیٰ ، اپوزیشن لیڈر کے پی کے اسمبلی اکرم خان درانی ایم این اے مولانا کمال الدین بھی شریک تھے ۔

سابق وزیراعلی نواب اسلم رئیسانی نے مولانا فضل الرحمان کی جانب سے پارٹی میں شمولیت کی دعوت کو قبول کرلیا،نواب اسلم رئیسانی آئندہ چند روز میں بلوچستان میں بڑا جلسہ کرکے جے یوآئی میں شامل ہوں گے ۔ اسلم رئیسانی نے کاہکہ بلوچستان میں آئندہ جے یوآئی حکومت بنائے گی، جے یوآئی بلوچستان کی بڑی سیاسی جماعت بن گئی ہے۔ مولانا فضل الرحمن نے کہاکہ لوگ نا اہل حکمرانوں سے تنگ آچکے ہیں، نواب صاحب آ پ کی شمولیت سے جے یوآئی بلوچستان میں مزید مضبوط ہوگی۔ علاوہ ازیں مولانا فضل الرحمان نے لاہور میں بم دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ جمعیت علماء اسلام کے رضا کار زخمیوں کو خون کے عطیات فراہم کریں۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments