اُردو پوائنٹ پاکستان اسلام آباداسلام آباد کی خبریںنائن الیون کے بعد دباو بڑ ھنے پر پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں امریکی ..

نائن الیون کے بعد دباو بڑ ھنے پر پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں امریکی اتحاد میں شامل ہوا، صدر آزاد کشمیر

اس کے بعد پاکستان کو بہت کم مالی امداد ملی،بھارت نے پاکستان کے خلاف بیک وقت تین محاذ پر جنگ شروع کر رکھی ہے , صدر آزاد کشمیر مسعود خان کا نیکٹا کانفرنس سے خطاب

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 اپریل2018ء) صدر آزاد کشمیر مسعود خان نے کہا ہے کہ امریکہ میں 11 ستمبرواقعہ کے بعد دباو بڑ ھنے پر پاکستان دہشت گردی کے خلاف جنگ میں امریکی اتحاد میں شامل ہوا، اس کے بعد پاکستان کو بہت کم مالی امداد ملی،بھارت نے پاکستان کے خلاف بیک وقت تین محاذ پر جنگ شروع کر رکھی ہے۔ منگل کو صدر آزاد کشمیر مسعود خان نے نیکٹا کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان گیارہ ستمبر سے قبل اسامہ بن لادن کو افغانستان سے نکالنے کے لئے کوشاں تھا۔

(خبر جاری ہے)

طالبان سے اسامہ بن لادن کو نکالنے کے لئے بات چیت کی جا رہی تھی۔امریکہ میں 11 ستمبر کا دہشت گردی کا واقعہ ہو گیا ۔ پاکستان پر دباو بڑھا اور دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان بھی امریکی اتحاد میں شامل ہو گیا۔امریکہ میں11 ستمبر کی دہشتگردی کے واقعے کے بعد پاکستان کو بہت کم مالی امداد ملی۔ 11 ستمبر کے بعد پاکستان کی اقتصادی ترقی اچھی تھی، امریکی صدر ٹرمپ کے دور میں پاک امریکہ سٹرٹیجک تعلقات منجمند ہو گئے۔ بھارت نے پاکستان کے خلاف بیک وقت تین محاذ پر جنگ شروع کر رکھی ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

اسلام آباد شہر کی مزید خبریں