اُردو پوائنٹ پاکستان اسلام آباداسلام آباد کی خبریںسندھ ہائی کورٹ کے پانچ ججز کو مستقل کرنے کی سفارش ججز تقرری کے جوڈیشل ..

سندھ ہائی کورٹ کے پانچ ججز کو مستقل کرنے کی سفارش

ججز تقرری کے جوڈیشل کمیشن نے معاملہ منظوری کیلئے پارلیمانی کمیٹی کو بھجوادیا

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 نومبر2017ء) ججز تقرری کے جوڈیشل کمیشن نے سندھ ہائی کورٹ کے پانچ ججز کو مستقل کرنے کی سفارش کرکے معاملہ حتمی منظوری کے لیے پارلیمانی کمیٹیکو بھجوا دیا ۔

(خبر جاری ہے)

پیر کے روز ججز تقرری جوڈیشل کمیشن کا اجلاس چیف جسٹس ثاقب نثار کی سر براہی میں ہوا ،جس میں سندھ ہائی کورٹ کے ججز جسٹس نسیم صدیقی، جسٹس خادم حسین، جسٹس عمر سیال ، جسٹس عدنان میمن ، جسٹس یوسف سید کی مستقلی پو غور کیا گیا ،کمیشن نے پشاور ہائی کورٹ کے ایڈیشنل جج جسٹس محمد ایوب کی مستقلی کے معاملہ پر بھی غور کیا گیا ،کمیشن نے ناموں پر غور کرنے پر انہیں مستقل کرنے کی سفراش کرکے معاملہ پارلیمانی کمیٹی کو بھجوا دیا ،ذرائع کے مطابق جوڈیشل کمیشن رولز کا جائزہ لینے لینے کے کمیشن نے پانچ رکنی کمیٹی تشکیل بھی کی ہے جسکی سر براہی جسٹسس آصف سعید کھوسہ کرینگے اور اس میں پاکستان بار کونسل کا نمائندہ بھی شامل ہو گا،کمیٹی جوڈیشل کمیشن کے قواعد دو ہزار دس کا جائزہ لیکر ترامیم کی سفارش کریگی۔



اپنی رائے کا اظہار کریں -

اسلام آباد شہر کی مزید خبریں