چندہ جمع کرنے والوں پر دہشت گردی ایکٹ کے 367مقدمات درج کیے گئے،ایف اے ٹی ایف کے تحت ایکشن پلان پر عملدرآمد رپورٹ جاری

ہفتہ دسمبر 19:04

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 07 دسمبر2019ء) پاکستان کی جانب سے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) کے ایکشن پلان کے تحت اٹھائے جانے والے اقدامات کی رپورٹ جمع کرادی جس کے تحت چندہ جمع کرنے والوں پر دہشت گردی ایکٹ کے 367مقدمات درج کیے گئے۔ نجی ٹی وی کے مطابق رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ گزشتہ ڈیڑھ سال میں 8 کالعدم تنظیموں کے خلاف دہشت گردوں کی مالی ماونت کے تحت مقدمات میں 400 اور سزاؤں میں 403فیصد تک اضافہ ہوا۔

واضح رہے کہ ایکشن پلان کا مقصد منی لانڈرنگ اور دہشت گردوں کی مالی معاونت روکنے کے نظام میں موجود خامیوں کو ختم کرنا ہے۔ایکشن پلان رپورٹ کے مطابق دہشت گردوں کی مالی معاونت پر مجموعی طور پر 196افراد کو سزائیں ہوئی اور نومبر 2019تک چندہ جمع پر کرنے پر دہشت گردی ایکٹ کی367مقدمات درج کیے گئے۔

(جاری ہے)

مذکورہ رپورٹ میں کہا گیا کہ اگست سے نومبر 2019کے دوران 29 مقدمات درج کیے گئے، اس کے علاوہ 8 کالعدم تنظیموں کے خلاف مجموعی طور پر دہشت گردی ایکٹ کے 196مقدمات درج کیے۔

رپورٹ کے مطابق نومبر 2019 تک دہشت گرد تنظیم داعش کے خلاف چندہ جمع کرنے کی17مقدمات رجسٹرڈ کیے گئے۔ایف اے ٹی ایف کے ایکشن پلان کے تحت کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے خلاف 25 اور القاعدہ کے خلاف 10 مقدمات درج کیے گئے۔فراہم کردہ تفصیلات کے مطابق کالعدم تنظیم جیش محمد کے خلاف فنڈز جمع کرنے پر 91 مقدمات درج ہوئے۔اس ضمن میں رپورٹ میں بتایا گیا کہ نومبر2019 تک کالعدم جماعت الدعواة کے خلاف 47 اور کالعدم لشکر طیبہ کے خلاف چندہ جمع کرنے پر 2 مقدمات ہوئے۔

رپورٹ کے مطابق تحریک طالبان افغانستان کے خلاف دہشت گردی ایکٹ کے تحت 4مقدمات درج ہوئے۔اعداد و شمار میں یہ بات بھی سامنے آئی کہ مذکورہ تنظیموں کے خلاف پنجاب میں چندہ جمع کرنے پر 133دہشت گردوں کی مالی معاونت کے مقدمات درج کیے گئے جس میں خیبر پختونخوا سے 34، سندھ سے 17 اور بلوچستان سے 12مقدمات شامل ہیں۔اس حوالے سے بتایا گیا کہ تنظیموں کے خلاف کھالیں جمع کرنے پر دہشت گردی ایکٹ کے تحت 4مقدمات بھی درج کیے گئے۔

مذکورہ رپورٹ میں داعش اور ٹی ٹی پی کے خلاف اغوا برائے تاوان، بھتہ خوری، حوالہ، بینک ڈکیتی، منشیات کے بالتریب 46 اور 205 مقدمات درج ہوئے۔کالعدم جیش محمد اور جماعت الدعوةکے خلاف عطیہ جمع کرنے، این پی اوز کے غلط استعمال پر بالترتیب 97 اور 85 مقدمات درج کیے گئے۔سزاؤں سے متعلق رپورٹ میں بتایا گیا کہ پنجاب میں دہشت گردوں کی مالی معاونت پر 145، کے پی میں 43، سندھ میں 7، بلوچستان میں ایک شخص کو سزا دی گئی۔علاوہ ازیں ایف اے ٹی ایف کے ایکشن پلان کے تحت داعش 13، ٹی ٹی پی کے 37، جماعت الدعوہ کے 18اور لشکر طیبہ کے ایک شخص کو دہشت گردوں کی مالی معاونت پر سزا دی گئی'۔

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments