قومی ادارہ صحت اسلام آباد نے ڈینگی بخار کی روک تھام اور کنٹرول سے متعلق ایڈوائزری جاری کر دی

جمعہ 22 اکتوبر 2021 17:21

اسلام آباد۔22اکتوبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی - اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی - اے پی پی۔ 22 اکتوبر2021ء۔ 22 اکتوبر2021ء) :ڈینگی بخار کے موسمی رجحان کو مدنظر رکھتے ہوئے قومی ادارہ صحت اسلام آباد نے ڈینگی بخار کی روک تھام اور کنٹرول سے متعلق ایڈوائزری جاری کر دی ہے۔ اس ایڈوائزری کا مقصد انسانوں اور جانوروں کی صحت سے متعلقہ  اداروں کو آگاہ کرنا ہے تاکہ  ڈینگی کی روک تھام اور کنٹرول کے لئے بروقت اقدامات کئے جا سکیں۔

ایڈوائزری کے مطابق ڈینگی ایک وائرل بیماری ہے جو کہ ایڈیز نسل کے مچھروں سے پھیلتی ہے، یہ مچھرپاکستان کے تقریبا ًتمام جغرافیائی علاقوں میں موجود ہے۔ اس مچھر کی پہچان یہ ہے کہ اس کے جسم پر سیاہ اور سفید رنگ کی دھاریاں پائی جاتی ہیں ۔

(جاری ہے)

دستیاب اعداد و شمار کے مطابق 2019 کے دوران ڈینگی بخار کی وجہ سے 95 اموات اور 53،498 کیس رپورٹ ہوئے  جبکہ 2020 کے دوران 6،016 کیس رپورٹ ہوئے ، اور ستمبر 2021 تک 3،795 کیس رپورٹ ہوئے۔

ایڈوائزری میں ڈینگی بخار کے بارے میں عام  افراد، صحت کے حکام اور متعلقہ اداروں کواحتیاطی اقدامات کے بارے میں آگاہ کیا  گیاہےاور صحت عامہ سے متعلقہ اداروں کو موسمی خطرات پر مسلسل نظر رکھنے اور تمام ممکنہ اقدامات لینے کی نصیحت بھی کی گئی ہے۔ایڈوائزری کے مطابق ڈینگی بخار سے بچنے کے لئے احتیاطی تدابیر اختیار کرنا ضروری ہیں جن میں    ذاتی حفاظتی اقدامات جیسے پوری آستین والےکپڑے پہننا ، مچھر بھگانے والے لوشن/سپرے کا استعمال وغیرہ،   روشندان ، کھڑکیوں اور دروازوں  پر جالی کا استعمال،    سوتے وقت بستر کی جالی کا استعمال شامل ہے۔ یہ ایڈوائزری قومی ادارہ صحت کی ویب سائٹ پر بھی دستیاب ہے۔

متعلقہ عنوان :

اسلام آباد شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments