کراچی ،سندھ فوڈ اتھارٹی کی ناک کے نیچے زہریلا کھانا کھلایا جاتا ہے اور کسی کو پتہ نہیں چلتا ،خرم شیر زمان

ہمارے بچے فوڈ پوائزننگ سے مر رہے ہیں،سندھ فوڈ اتھارٹی کو اپنا کام درست طریقے سے انجام دینے کی ضرورت ہے،رہنما تحریک انصاف و ممبر سند ھ اسمبلی

منگل نومبر 20:54

کراچی ،سندھ فوڈ اتھارٹی کی ناک کے نیچے زہریلا کھانا کھلایا جاتا ہے ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 نومبر2018ء) پاکستان تحریک انصاف کراچی ڈویژن کے صدر و رکن سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے کہا ہے کہ سندھ فوڈ اتھارٹی کی ناک کے نیچے زہریلا کھانا کھلایا جاتا ہے اور کسی کو پتہ نہیں چلتا۔ ہمارے بچے فوڈ پوائزننگ سے مر رہے ہیں، اس بات کا ذمہ دار کون ہے۔ سندھ فوڈ اتھارٹی کو اپنا کام درست طریقے سے انجام دینے کی ضرورت ہے۔

بچوں کی وفات کے بعد بھی اس بات کا پتہ نہیں چل سکا کہ اس واقعے کا اصل محرک کیا تھا۔ فوڈ انسپکٹرز کے اثاثے چیک کیے جائیں تو ہم صحت کے معاملات سے نکل کر بدعنوانی کی طرف چلے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت کو اپنی ذمہ داریوں کا احساس کرنا ہوگا۔ کراچی کو فراہم کی جانے والی صحت و صفائی کی سہولیات مقدار اور معیار دونوں اعتبار سے ناکافی ہیں۔

(جاری ہے)

سندھ بالخصوص کراچی کے بارے میں سندھ حکومت کو اپنی پالیسی درست کرنا ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ غلط پالیسیوں کے ساتھ ساتھ بدعنوانی کا عفریت بھی سندھ حکومت کے ساتھ چمٹا ہوا ہے۔ پیپلز پارٹی اگر محکمہ صحت کوہی ٹھیک کردیتی تو لوگ سکھ کا سانس لے سکتے تھے۔ سرکاری ہسپتالوں میں مریضوں کی حالت زار سندھ حکومت کے چہرے پر بدنما داغ ہے۔ ڈاکٹرو ں سمیت ہسپتالوں کا طبی عملہ مریضوں پر کوئی توجہ نہیں دیتا۔ رشوت اور سفارش کراچی کے ہسپتالوں کا کلچر بن چکی ہے۔ بدعنوانی طبی عملے کے چھوٹے سے چھوٹے افسر سے لے کر اوپر تک موجود ہے۔ لوگ اپنے مسائل کا حل چاہتے ہیں۔ عوام کے مسائل حل کرنا ہی حکومتوں کاکام ہوتا ہے۔ سندھ حکومت اپنے فرائض سے غفلت برت رہی ہے۔ #

کراچی شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments