بلاول بھٹو آئی جی سندھ سے ملاقات کے لیے پولیس ہیڈکوارٹرز پہنچ گئے

آئی جی سے ملاقات کے دوران وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ اور چھٹی پر جانے والے تمام افسران بھی موجود، ملاقات کے دوران بلاول بھٹو نے آئی جی سندھ کو کام جاری رکھنے کی تلقین کی: میڈیا ذرائع

Shehryar Abbasi شہریار عباسی منگل اکتوبر 21:35

بلاول بھٹو آئی جی سندھ سے ملاقات کے لیے پولیس ہیڈکوارٹرز پہنچ گئے
لاہور(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 اکتوبر2020ء) بلاول بھٹو آئی جی سندھ سے ملاقات کے لیے ان گھر پہنچ گئے ۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری سندھ پولیس ہیڈکوارٹرز پہنچ گئے ۔ بلاول بھٹو آئی جی سندھ مشتاق احمد مہر سے ملاقات کے لیے آئی جی ہاؤس پہنچے۔ آئی جی سے ملاقات کے دوران وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ بھی بلاول بھٹو کے ہمراہ موجود ہیں ۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق آئی جی ہاؤس میں چھٹی پر جانے والے تمام افسران بھی موجود ہیں ۔ ذرائع کے مطابق آئی جی سندھ مشتاق احمد مہر کی بلاول بھٹو سے ملاقات کے دوران سینیئر افسران بھی موجود ہیں ۔ ملاقات کے دوران بلاول بھٹو نے آئی جی سندھ کو کام جاری رکھنے کی تلقین کی ۔ تفصیلات کے مطابق سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر شیئر کی گئی ایک تصویر کے ساتھ چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو نے لکھا کہ " میں سندھ پولیس کے ساتھ کھڑا ہوں، کیا آپ بھی ؟
تصویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ بلاول بھٹو آئی جی سندھ اور سندھ پولیس کے سینیئر افسران کے ہمراہ کھڑے ہیں۔

(جاری ہے)

یاد رہے کہ کراچی میں کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری کے معاملے کے بعد معلوم ہوا ہے کہ سندھ پولیس پر دباؤ ڈال کر گرفتاری کروائی گئی۔ جس کے باعث آئی جی پولیس سندھ مشتاق مہرغیرمعینہ مدت کیلئے چھٹیوں پر چلے گئے ہیں۔ کچھ کا کہنا ہے کہ 15روز کیلئے چھٹی پر گئے ہیں۔ اسی طرح ایڈیشنل آئی جی نے بھی دو ماہ کی چھٹی کی درخواست دے دی ہے۔اسی طرح معلوم ہوا ہے کہ آئی جی پولیس سندھ مشتاق مہر15 روز کی چھٹی پر چلے گئے ہیں۔

آئی جی سندھ آج دفتر بھی نہیں آئے۔اسی طرح ا یڈیشنل آئی جی اسپیشل برانچ نے بھی دو ماہ کی چھٹی کی درخواست دے دی ہے۔بتایا گیا ہے کہ عمران یعقوب بھی اپنی نوکری سے دلبرداشتہ ہوگئے ہیں۔ایڈیشنل آئی جی اسپیشل برانچ عمران یعقوب نے کہا کہ سندھ پولیس کے کام میں بے جا مداخلت ہوئی ہے۔ کیپٹن ر صفدر کی ایف آئی آر کے واقعے میں پولیس افسران کو بے عزت کیا گیا۔

دباؤ کے اس ماحول میں پیشہ ورانہ فرائض کی انجام دہی مشکل ہے۔اس دباؤ سے نکلنے کیلئے مجھے 60 روز کی رخصت چاہیے۔ایسے ماحول میں کام نہیں کرسکتا۔ڈی آئی جی لاڑکانہ ناصر آفتاب اور سی سی پی او کراچی غلام نبی میمن بھی چھٹیوں پر چلے گئے ہیں۔ اس سے قبل وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے پریس کانفرنس میں مسلم لیگ (ن) کے رہنماء کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری سے متعلق معاملے کی تحقیقات کے لیے وزراء پر مشتمل تحقیقاتی کمیٹی بنانے کا اعلان کیا۔

کراچی شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments