اُردو پوائنٹ پاکستان کراچیکراچی کی خبریںبجٹ دستاویزات 18 مئی تک فائنل کرکے شائع کرنے کافیصلہ رواںسال کیلیے نظرثانی ..

بجٹ دستاویزات 18 مئی تک فائنل کرکے شائع کرنے کافیصلہ

رواںسال کیلیے نظرثانی شدہ ومڈٹرم بجٹری تخمینے بھی بجٹ ونگ کوبھیجنے کی ہدایت

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 فروری2018ء)وفاقی حکومت نے بجٹ ان بریف سمیت آئندہ مالی سال کے بجٹ کی دستاویزات کو 18 مئی تک حتمی شکل دے کر اشاعت شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کے لیے وزارت خزانہ نے تمام وزارتوں اور ڈویژنوں کورواں مالی سال کے لیے نظرثانی شدہ تخمینہ جات اور آئندہ مالی سال کے بجٹ تخمینے 28 فروری تک بھجوانے کی ہدایات کردی ہے۔

وزارت خزانہ حکام کے مطابق فنانس ڈویژن کے بجٹ ونگ کی جانب سے تمام وزارتوں اور ڈویژنوں کو مراسلہ بھجوایا گیا ہے کہ خزانہ ڈویژن کے بجٹ ونگ کی جانب سے سال 2018-19 کے لیے بجٹ ان بریف کی دستاویز کی تیاری اختتامی مراحل میں ہے اور اس میں آئندہ مالی سال کے آمدنی و اخراجات کی تفصیلات سمیت دیگر تمام بجٹ تخمینہ جات اور رواں مالی سال کے نظرثانی شدہ بجٹ تخمینہ جات کی ری کنسلیشن کرکے ان کے بجٹ ان بریف میں شامل کیا جارہا ہے لہذا تمام وزارتوں اور ڈویژنوں کو ہدایت کی جاتی ہے کہ رواں مالی سال کے نظرثانی شدہ تازہ ترین بجٹ تخمینہ جات بجٹ ونگ خزانہ ڈویژن کو بھجوائے جائیں ۔

(خبر جاری ہے)

اس کے علاوہ آئندہ مالی سال کے بجٹ کے لیے بھی تازہ ترین تخمینہ جات بھجوائے جائیں۔ ذرائع کا کہناہے کہ وزارت خزانہ کی جانب سے تمام وزارتوں اور ڈویژنوں سے یہ بھی کہا گیا ہے کہ مڈ ٹرم بجٹری فریم ورک اور سالانہ ترقیاتی پلان، مجوزہ پی ایس ڈی پی کے تخمینہ جات بھی بھجوائے جائیں تاکہ ان کی بجٹ دستاویزات کو تیار کیا جا سکے اور قومی اقتصادی کونسل کے اجلاس کے بعد پی ایس ڈی اور سالانہ ترقیاتی پلان کے اعدادوشمار و تخمینہ جات کو حتمی شکل دے کر بجٹ دستاویزات کی اشاعت شروع کی جا سکے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

کراچی شہر کی مزید خبریں