پی بی ایف نے آمدنی سے 20 فیصد حصہ مانگا، باکسر محمد وسیم کا انکشاف

منگل 18 جنوری 2022 14:15

پی بی ایف نے آمدنی سے 20 فیصد حصہ مانگا، باکسر محمد وسیم کا انکشاف
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 18 جنوری2022ء) پاکستان کے پروفیشنل باکسر محمد وسیم نے انکشاف کیا ہے کہ پاکستان باکسنگ فیڈریشن (پی بی ایف) نیپروفیشنل باکسنگ کی آمدنی سے حصہ مانگا تھا۔میڈیا سے گفتگو محمد وسیم نے کہا کہ مجھے ایک کورین پروموٹر ملا تھا، جس نے کہا مجھے پروموٹ کرسکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ کورین شخص نے مجھے معاہدہ سے قبل صدر پی بی ایف سے بات کی خواہش کی تھی۔

باکسر محمد وسیم نے کہا کہ باکسنگ فیڈریشن نے کہا وہاں معاہدہ کررہے ہیں، ہم سے بھی معاہدہ کرلیں۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہاکہ مجھ سے کہا گیا باکسنگ میں جو آمدن ہوگی، اس کا 20 فیصد دوں، میرے پاس معاہدہ کو ماننے کے سوا کوئی چارہ نہیں تھا۔پاکستانی پروفیشنل باکسر نے کہا کہ اگر میں پی بی ایف کو انکار کرتا تو میں باقی باکسرز کی طرح ضائع ہوجاتا۔انہوں نے کہا کہ یہاں کوچز اے سی والے کمروں میں سوتے ہیں، یہاں باکسر پنکھوں کے نیچے سوتے ہیں، جہاں 2 ، 2 گھنٹے بجلی نہیں ہوتی تھی۔محمد وسیم نے کہا کہ مجھے فیملی کی طرف سے کوئی سپورٹ نہیں تھی، ایسوسی ایشن جاتے تو کوئی سپورٹ نہیں، فیڈریشن جاتے تو سہولیات میسر نہیں، ہماری تو زندگی باکسنگ میں جدوجہد میں تھی۔

متعلقہ عنوان :

کراچی شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments