آبپاشی زمین کی زرخیزی‘طریقہ کاشت فصل کی حالت اورموسم کو مدنظررکھ کرکرناضروری ہے،محکمہ زراعت قصور

ہفتہ اپریل 14:36

قصور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 20 اپریل2019ء) محکمہ زراعت نے کاشتکاروں کو ہدایت کی ہے کہ کپاس کی پٹڑیوں پر کاشت کی صورت میں کاشتکار پہلی آبپاشی بیجائی3سے 4دن بعداور دوسری آبپاشی6سے 9 دن کے وقفہ سے کریں تاہم اس کے بعد بقیہ پانی کا وقفہ 15روز کردیاجائے۔

(جاری ہے)

ترجمان محکمہ زراعت نے بتایا کہ اگرکپاس کے بعد گندم کاشت کرنی مطلوب ہو توپٹڑیوں پر کپاس کی کاشت کی صورت میں آخری پانی15اکتوبر تک لگانا ضروری ہے جبکہ قطاروں میں کپاس کاشت کرنے والے کسان پہلی آبپاشی بیجائی کے 30سے 35دن کے بعد کریں اور باقی آبپاشیاں 12 سے 15دن کے وقفے سے جاری رکھیں ۔

تاہم ماہرین زراعت کی مشاورت اور محکمہ زراعت کے فیلڈ سٹاف کی ہدایات کی روشنی میں موسم کے مطابق آبپاشی کے وقفہ میں ردوبدل کیا جاسکتاہے۔انہوں نے بتایا کہ آبپاشی زمین کی زرخیزی‘طریقہ کاشت‘قسم‘ فصل کی حالت اورموسم کو مدنظررکھ کرکرناضروری ہے۔انہو ں نے کہا کہ پانی کی کمی کی علامات کھیت کے نسبتاً اونچے حصے پر پہلے واضح ہوتی ہیں جس میں پتوں کا رنگ نیلگوں ہونا‘ اوپر والی شاخوں کے درمیان لمبائی میں کمی‘ سفید پھول کا چوٹی پر آنا‘تنے کا اوپرکاحصہ تیزی سے سرخ ہونا اور چوٹی کے پتوں کا کھردراہونا شامل ہے۔

متعلقہ عنوان :

قصور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments