قصورتعلیمی اداروں کی بندش کے خلاف آل پاکستان پرائیویٹ سکولز ایسوسی ایشن کی کال پر احتجاج

جمعہ مئی 21:42

قصور۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - اے پی پی۔ 29 مئی2020ء) تین ماہ سے لاک ڈائون کے باعث تعلیمی اداروں کی بندش کے خلاف آل پاکستان پرائیویٹ سکولز ایسوسی ایشن کی کال پر پنجاب بھر کی طرح قصور میں بھی اساتذہ اور اسکولز سربراہان نے گلے میں کفن اور روٹیاں لٹکا کر پر امن احتجاج کیا‘پرائیویٹ سکولز کی بندش کے خلاف اساتذہ و سربراہان کا کفن پہن کر اور گلے میں روٹیاں لٹکا کر شدید احتجاج ،تعلیمی اداروں کی بندش سے لاکھوں اساتذہ کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے ہو چکے اب مزید سکولز کی بندش قبول نہیں،پنجاب ایجوکیشن فائونڈیشن کے ایم ڈی ہٹائو تحریک کا بھی آج سے آغاز کر رہے ہیں،احتجاجی مظاہرین۔

(جاری ہے)

احتجاجی مظاہرین نے ڈی سی آفس کے احاطہ میں جانے کی کوشش کی تو ایس ایچ او بی ڈویژن امجد ڈوگر نے اساتذہ کے ساتھ بدتمیزی کی اور انکو دھکے مارے جس پر اساتذہ نے گیٹ پر ہی دھرنا دے دیا ۔مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے آل پاکستان پرائیویٹ اسکولز ایسوسی ایشن کے مرکزی صدر میاں شبیر احمد ہاشمی نے کہا کہ ہر کاروبار کھل چکا ،بازاروں میں انتہائی رش ہے مگر سمجھ سے بالا تر ہے کہ سکولز کو بند کر کے کروڑوں بچوں اور لاکھوں اساتذہ کے مستقبل سے کھیلا جا رہا ہے۔

قصور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments