ڈی سی اوپشاور نے خوشحال خان خٹک ایکسپریس پر چھاپہ مار کر بغیر ٹکٹ کے کئی مسافروں سے کرایہ وصول کر کے رقم قومی خزانے میں جمع کرادی

جمعہ نومبر 18:26

کوہاٹ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین - این این آئی۔ 08 نومبر2019ء) ڈویڑنل کمرشل اینڈ ٹرانسپوٹیشن آفیسر (ڈی سی او) پشاور طاہر مسعود مروت نے پشاور سے کراچی جانے والی خوشحال خان خٹک ایکسپریس پر چھاپہ مار کر بغیر ٹکٹ کے کئی مسافروں سے کرایہ و جرمانے کی مد میں تقریبا"ساڑھے 5 ہزار روپے لے کر قومی خزانے میں جمع کرادیئے جبکہ اٹک سٹی ریلوے اسٹیشن کا معائنہ کرتے ہوئے موجود ریستوران اور جنرل سٹور میں صفائی کے ناقص انتظامات، غیر معیاری اور مضرصحت اشیاء کی فروخت پر ریستوران مالک کو 2000 اور جنرل سٹور مالک کو 1000 جرمانہ کیا۔

یہاں محکمہ ریلوے کے جاری بیان کے مطابق ڈی سی او طاہر مسعود مروت نے جمعہ کے روز حیات شیر پاؤ شہید ریلوے اسٹیشن پر اچانک چھاپہ مارا اور دوران انسپکیشن اسٹیشن سٹاف کو ڈیوٹی میں غفلت اور قانون سے ہٹ کر مسسل لمبی ڈیوٹی کرنے پر تمام سٹاف کا شوکاز نوٹس جاری کر دیے۔

(جاری ہے)

بعد ازاں ڈی سی او پشاور نے پشاور سے کراچی جانے والی خوشحال خان خٹک ایکسپریس میں سپیشل گروپ آف ٹکٹ ایگزامینرز کے ہمرا بغیر ٹکٹ کے کئی مسافروں سے کرایہ و جرمانے کی مد میں مبلع 5ہزار 649 روپے قومی خزانے میں جمع کرادیئے۔

ڈی سی او پشاور نے اٹک سٹی ریلوے اسٹیشن پر موجود ریستوران اور جنرل سٹور کا معائنہ بھی کیا اور صفائی کے ناقص انتظامات، غیر معیاری اور مضرصحت اشیاء کی فروخت پر ریستوران مالک کو 2000 جبکہ جنرل سٹور مالک کو 1000 جرمانہ کیا۔اس موقع پر ڈی سی او کا کہنا تھا کہ مسافروں کے لیے ریلوے اسٹیشنوں پر دستیاب کھانے پینے کی اشیاء پر کوئی سمجھوتا نہیں کیا جائیگا۔انہوں نے کہا کہ غیر معیاری اشیاء کی فروخت ممنوع ہے اور بغیر ٹکٹ سفر کرنے والوں کی حوصلہ شکنی کے لیے کاروائیاں جاری رہے گی۔

کوہاٹ شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments