اُردو پوائنٹ پاکستان لاہورلاہور کی خبریںڈالرکی قیمت میں تاریخی اضافہ اور روپے کی قدرمیں مسلسل کمی تشویشناک ..

ڈالرکی قیمت میں تاریخی اضافہ اور روپے کی قدرمیں مسلسل کمی تشویشناک ہے‘میاں مقصود احمد

, ملکی معیشت خوفناک بحران کی طرف بڑھ رہی ہے،کشکول توڑنے والوں نے قوم کوبھکاری بنادیاہے،ایم ایم اے کی کرپشن سے پاک قیادت ملک وقوم کو قرضوں سے نجات دلاسکتی ہے‘صدرمتحدہ مجلس عمل پنجاب وامیر جماعت اسلامی پنجاب کامنصورہ میں اہم اجلاس سے خطاب

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 جولائی2018ء) متحدہ مجلس عمل پنجاب کے صدر اور امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمد نے کہاہے کہ ڈالر کی قیمت میں ہوشربااضافہ اور روپے کی قدر میں جاری مسلسل کمی انتہائی تشویش ناک ہے، ڈالر ملکی تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا ہے جس کی وجہ سے ملکی معیشت ایک خوفناک بحران کی طرف بڑھتی نظر آ رہی ہے،مہنگائی کا ایک نیا طوفان دروازوں پر دستک دے رہا ہے،ڈالر مہنگاہونے سے صرف ایک ہی دن میں 800ارب روپے کے اضافے سے بیرونی قرضہ 8 ہزار 120 ارب روپے تک پہنچ چکا ہے جس سے نہ صرف مہنگائی کا طوفان آئے گا بلکہ غریب عوام کی زندگی بھی اجیرن ہوجائے گی۔

ان خیالات کا اظہارانہوں نے گزشتہ روزمنصورہ میں اہم اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہ ایک ہی دن میں روپے کی اتنی بے قدری اس بات کا ثبوت ہے کہ مسلم لیگ(ن)کی گزشتہ حکومت اور موجودہ نگران حکومت کو پاکستانی معیشت کی بہتری سے کوئی غرض نہیں ہے۔

(خبر جاری ہے)

کشکول توڑنے کے دعویداروں نے ملک وقوم کوبھکاری بنادیاہے۔آئی ایم ایف اور ورلڈبنک سمیت دیگر عالمی مالیاتی اداروں نے ہماری معیشت کو جکڑرکھاہے۔

انہوں نے کہاکہ ملکی معیشت عاقبت نااندیش فیصلوں اور غیر یقینی صورتحال کے باعث انتہائی دگرگوںہے۔عوام کی نصف سے زائد آبادی کو دووقت کی باعزت روٹی بھی میسر نہیں۔اس وقت ملک کی40فیصد آبادی سطح غربت سے نیچے زندگی گزارنے پر مجبور ہے۔مہنگائی اور بے روزگاری کے باعث مزدوروں کے گھروں میں نوبت فاقہ کشی سے بڑھ کر خودکشی تک پہنچ گئی ہے۔انہوں نے کہاکہ 25جولائی کے انتخابات میں عوام ایم ایم اے کوکامیاب کرائیں،ہم معاشی نظام کو بہتر بنانے کے ساتھ ساتھ ملک وقوم کو قرضوں کی دلدل سے نکالیں گے۔

ملک کوکرپشن اور لوٹ مار سے وہی لوگ بچاسکتے ہیں جن کے اپنے دامن صاف ہوں،ہمارے دامن صاف ستھرے اور ہر قسم کی کرپشن سے پاک ہیں۔انہوں نے کہاکہ ملکی معیشت کی تنزلی کی سب سے بڑی وجہ سودی نظام ہے۔جب تک ملک سے سودی نظام کاخاتمہ نہیں کردیاجاتب تک خوشحالی نہیں آسکتی۔میاں مقصوداحمد نے مزیدکہاکہ حکمران عوام کو ریلیف فراہم کرنے میں بری طرح ناکام ہوچکے ہیں۔معیشت کی بحالی اور عوام کی فلاح وبہبود کے لیے ذاتی مفادات سے بالاترہوکر ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔پاکستانی معیشت کے دیوالیہ ہونے کے خطرات منڈلانے لگے ہیں جوکہ تشویش ناک امراور لمحہ فکریہ ہے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

لاہور شہر کی مزید خبریں