لاہور میٹرو بس میں لڑکی کا بھیک مانگنے کا انوکھا انداز

لڑکی نے گانوں پر رقص کر کے بھیک مانگی ، میٹروبس انتظامیہ نے بس سے باہر نکال دیا

Sumaira Faqir Hussain سمیرا فقیرحسین ہفتہ ستمبر 13:22

لاہور میٹرو بس میں لڑکی کا بھیک مانگنے کا انوکھا انداز
لاہور (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 22 ستمبر 2018ء) : گداگری ہمارے معاشرے کا ایک ایسا المیہ ہے جسے افسوسناک حد تک ایک پیشے کی شکل دے دی گئی ہے۔ ٹریفک سگنلز اور سڑکوں پر جگہ جگہ لڑکے ، لڑکیاں، بوڑھے افراد اور یہاں تک کہ بچے بھی بھیک مانگتے ہوئے نظر آتے ہیں۔ افسوس تو یہ معاشرے سے گدا گری کے سد باب کے لیے نہ تو کوئی قانون ہے اور نہ ہی کوئی اس طرف توجہ دیتا ہے۔

اب سے کچھ دیر قبل لاہور کی میٹروبس میں بھی ایک لڑکی بھیک مانگنے کی غرض سے سوار ہوئی لیکن اس کے بھیک مانگنے کے انداز سے سب کو حیران کر دیا ۔ لاہور میٹرو بس میں بھیک مانگنے کے لیے مذکورہ لڑکی نے ایک انوکھا انداز اپنایا اور میوزک پر رقص کر کے بھیک مانگنے لگی۔ یہ لڑکی ٹمبر مارکیٹ کے بس اسٹاپ سے سوار ہوئی جس کے بعد میٹروبس انتظامیہ نے اس لڑکی کو آزادی چوک فلائی اوور کے بس اسٹاپ پر بس سے باہر نکال دیا۔

(جاری ہے)

میڈیا رپورٹ کے مطابق میٹرو بس میں سوار ہوتے ہی مذکورہ لڑکی نے اپنے موبائل فون پرگانے لگائے اور رقص کرنا شروع کر دیا جس کو دیکھ کر میٹرو بس میں سوار لوگ بھی حیران ہو گئے کہ آخر یہ کون لڑکی ہے اور کیا کر رہی ہے؟ میٹروبس میں موجود خواتین نے اس لڑکی کا رقص دیکھا تو شرم سے پانی پانی ہو گئیں۔ لڑکی نے رقص کرتے ہوئے میٹروبس میں سوار شہریوں سے بھیک بھی مانگی۔

جس پر تین خواتین مسافروں نے اسے 10، 10 روپے دئے، میٹروبس انتظامیہ نے لڑکی کو روکنے کی کوشش کی لیکن لڑکی نہ رُکی جس کے بعد اسے آزادی چوک فلائی اوور کے بس اسٹاپ پر بس سے باہر نکال دیا گیا۔ میٹرو بس میں لڑکی کے رقص کرتے ہوئے بھیک مانگنے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر بھی وائرل ہوئی جسے صارفین نے سخت تنقید کا نشانہ بنایا۔ اس ویڈیو کو آپ بھی ملاحظہ کیجئیے:

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments