4شہروں میں سہولیات میں اضافہ ، ایشین ڈویلپمنٹ بینک300ملین ڈالر دیگا‘عبدالعلیم خان

ہر قیمت پر رقوم کا شفاف استعمال یقینی بنایا جائے‘سینئر صوبائی وزیر عبدالعلیم خان کی ہدایت

منگل نومبر 20:15

4شہروں میں سہولیات میں اضافہ ، ایشین ڈویلپمنٹ بینک300ملین ڈالر دیگا‘عبدالعلیم ..
لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 نومبر2018ء) پنجاب کی4شہروںمیں موجودہ سہولیات کو اپ گریڈ کرنے اور انفرا سٹرکچر کی بہتری کیلئے ایشین ڈویلپمنٹ بینک300ملین ڈالر دے گا اور پنجاب حکومت اسی منصوبے کیلئی50ملین ڈالر فراہم کرے گی ۔سینئر وزیر پنجاب عبدالعلیم خان نے ہدایت کی ہے کہ رقوم کے شفاف استعمال کو ہر قیمت پر یقینی بنایا جائے اور پنجاب کا لوکل گورنمنٹ اینڈ کمیونٹی ڈویلپمنٹ ڈیپارٹمنٹ اس امر کو یقینی بنائے کہ قوانین و ضوابط پر مکمل طور پر عمل کیا جارہا ہے ، اس پروگرام میں سرگودھا ،مظفر گڑھ ،رحیم یار خان اور بہاولپور کے شہر شامل ہیں جبکہ یہ پنجاب انٹر میڈیٹ سٹی امپروومنٹ انویسٹمنٹ پروگرام کا دوسرا مرحلہ ہے جس کے پہلے مرحلے میں سیالکوٹ اور ساہیوال کے شہروں کی سہولیات میں اضافہ کیا گیا تھا جبکہ اس پروگرام میں سالڈ ویسٹ مینجمنٹ ،پینے کے صاف پانی کی سپلائی ،نکاسی آب کی بہتر سہولیات اور دیگر شہری ضروریات شامل ہیں ،سینئر وزیر پنجاب عبدالعلیم خان نے کہا کہ ماضی میں سرکاری فنڈز کی خردبرد اور من پسند کمپنیوں میں تقسیم کی گئی لیکن موجودہ حکومت اس امر کو یقینی بنائے گی کہ سرکاری فنڈز کا ایک ایک پیسہ درست طور پر استعمال میں لایا جارہا ہے۔

(جاری ہے)

یہ امر قابل ذکر ہے کہ پنجاب سٹیز امپروومنٹ انویسٹمنٹ پروگرام کے تحت اس حوالے سے ورکشاپ کا بھی انعقاد کیا گیا جس سے پراجیکٹ ڈائریکٹر رومین واؤنٹ ،پراجیکٹ مینجر برائن کیپیٹی ،ٹیم لیڈر اربن رزیلئینس اعظم نجی ، ڈپٹی ٹیم لیڈر ندیم خورشید اورکیپیسٹی ڈویلپمنٹ سپیشلسٹ دینا خان نے اظہار خیال کرتے ہوئے اس پروگرام کی آفادیت پر روشنی ڈالی ،پروگرام ڈائریکٹر قیصر سلیم نے کہا کہ پنجاب کے مختلف اضلاع میں انفراسٹرکچر کو بہتر بنانے کے سلسلے میں ایشین ڈویلپمنٹ کی کوشیں لائق تحسین ہیں ،انہوں نے کہا کہ اس منصوبے کے تحت سرگودھا اور جنوبی پنجاب کی ترقی میں اہم مدد ملے گی جبکہ 15اور16نومبر کو اس سلسلے میں بہاولپور میں ورکشاپس بھی ہونگی ،یاد رہے کہ اس منصوبے میں اُن شہروں کو شامل کیا جاتا ہے جن کی آبادی اڑھائی سے لے کر10لاکھ تک ہو ۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments