فنکاروں کے لئے ہیلتھ کارڈ متعارف کروا رہے ہیں‘فیاض الحسن چوہان

وائس آف پنجاب کے زریعے نئے گلوکار سامنے لائے جائیں گے‘صوبائی وزیر اطلاعات و ثقافت

جمعرات نومبر 20:14

فنکاروں کے لئے ہیلتھ کارڈ متعارف کروا رہے ہیں‘فیاض الحسن چوہان
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 نومبر2018ء) صوبائی وزیر اطلاعات و ثقافت فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ پنجاب میں 4لاکھ ما لیت کا آرٹسٹ ہیلتھ انشورنس کارڈ متعارف کروایا جا رہاہے۔ جس سے ہر سال فنکاروں سمیت فنون لطیفہ سے وابستہ ہر شعبہ کے افراد مستفید ہونگے، ابتدائی مرحلے میں دس ہزار فنکاروں کو ہیلتھ انشورنس کارڈ کی سہولت فراہم کی جائے گی،فنکاروں کے لئے پروگرامز منعقد کئے جائیں گے جن میں پرفارم کرنے پر ان کو ایک ایک لاکھ روپے دیا جائے گا۔

ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر اطلاعات و ثقافت فیاض الحسن چوہان نے آج الحمرا میں فنون لطیفہ کے شعبے سے تعلق رکھنے والی نامور شخصیات سے ملاقات کے دوران کیا۔ صوبائی وزیر اطلاعات و ثقافت فیا ض الحسن چوہان نے کہا کہ وائس آف پنجاب کے نام سے نئے گلوکاروں کے لئے ٹیلنٹ ہنٹ پروگرام کا انعقاد کیا جارہا ہے جس کے زریعے نئے فنکاروں کی حوصلہ افزائی کی جائے گی۔

(جاری ہے)

ادب و ثقافت کے شعبے میں خدمات سرانجام دینے والے لیجنڈز کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے انہوں نیکہا کہ یہ ہمارے ملک کے سفیر ہوتے ہیں جو ملکی ترقی اور نیک نامی کے لئے کام کرتے ہیں،ہم ان کو مشکل وقت میں بے یار و مددگار نہیں چھوڑیں گے، وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار کی قیادت میں محکمہ اطلاعات و ثقافت نے فنکاروں کی بہبود کے لئے بھرپور اقدامات کئے ہیں اور آئندہ بھی ٹھوس نتائج کے حامل اقدامات کئے جارہے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ آنے والے دنوں میں بہت کچھ بہتری کی طرف گامزن ہوتانظر آئے گا،الحمرا میں سپاہی مقبول حسین کی زندگی سے ماخوذ ڈرامہ پیش کیا گیا ہے جس کو وسیع پیمانے پر سراہا گیا ہے، اب ہم جہیز کی لعنت پر آگہی دینے کے لئے ڈرامہ بنانے جارہے ہیں۔انھوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ شاہد آفریدی ہمارا ہیرو ہے کشمیر پورے پاکستان کا ہے،اجلاس میں چیئرمین الحمرا توقیر ناصر،نامور ڈائریکٹر پرویزکلیم،اداکار خالد عباس ڈار ،فلم ڈائریکٹر سید نور،گلوکار حامد علی خان،گلوکار انور رفیع،اداکاراورنگزیب لغاری،مصور غلام مصطفی،راحت نوید مسعود،گلوکارہ حمیرا ارشد کے علاوہ دیگر اہم شخصیات نے شرکت کی۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments