اُردو پوائنٹ پاکستان لاہورلاہور کی خبریںبلوچستان کی محرومیوں کو ختم کرنے کیلئے قومی پالیسی بنانا ہوگی،شہباز ..

بلوچستان کی محرومیوں کو ختم کرنے کیلئے قومی پالیسی بنانا ہوگی،شہباز شریف

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 4جنوری2013ء) وزیر اعلٰی پنجاب شہبازشریف کا کہنا ہے کہ بلوچستان کی محرومیوں کے ازالے کیلئے قومی اتفاق رائے سے پالیسی بنانا ہوگی ۔پنجاب کے تعلیمی ادروں میں بلوچ طلباوطالبات کے کوٹہ میں اضافہ کیا جائے گا۔ وزیر اعلٰی پنجاب نے بلوچستان سے تعلق رکھنے والے ارکان پارلیمنٹ ،دانشوروں مذہبی رہنماؤں اور صحافیوں کے اعزاز میں استقبالیہ دیا ۔

(خبر جاری ہے)

استقبالیہ میں سینیٹر سردار ذوالفقار خان کھوسہ ، خواجہ سعد رفیق، عبدالقادر بلوچ، حافظ حسین احمد ،ڈاکٹر جہانزیب جمال ،طارق عظیم ، الطاف حسن قریشی ، عطاءالحق قاسمی ، اور دیگر نے شرکت کی ۔ وزیر اعلٰی شہبازشریف کا اس موقع پر کہنا تھا کہ بلوچستان کا مسئلہ پورے پاکستان کیلئے نہایت اہم ہے۔مذاکرات کے ذریعے بلوچ قوم کے زخموں پر مرہم رکھنا ہوگا ۔

پنجاب نے این ایف سی ایوارڈ کے دوران 11 ارب روپے اپنے بلوچ بھائیوں کو دئیے۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب کے تعلیمی ادروں میں بلوچ طلباوطالبات کے کوٹہ میں اضافہ کیا جائے گا ۔بلوچ وفد کا کہنا تھا کہ شہبازشریف نے بلوچ طلبا کیلئے جو کیا وہ بلوچستان کے حکمران بھی نہ کر سکے۔امید ہے مسلم لیگ ن بلوچستان کا مسئلہ حقیقی طور پر حل کرنے کے اقدامات کرے گی ۔

اپنی رائے کا اظہار کریں -

لاہور شہر کی مزید خبریں