حکمران پاکستان کی معیشت کو چلانے میں ناکام ہو گئے ہیں۔ کلثوم نواز کا پُرانا بیان سوشل میڈیا پر وائرل

نالائق اور نااہل حکمران پاکستان کی جن ملکوں سے دوستی تھی اس کو قائم رکھنے میں فیل ہو گئے ہیں،صارفین نے مرحومہ بیگم کلثوم نواز کے بیان کو موجودہ حکمرانوں سے تشبیہ دے دی

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان بدھ ستمبر 13:51

حکمران پاکستان کی معیشت کو چلانے میں ناکام ہو گئے ہیں۔ کلثوم نواز کا ..
لاہور(اُردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔11 ستمبر 2018ء) سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کی اہلیہ سابق خاتون اول کلثوم نواز کی پہلی برسی آج منائی جا رہی ہے۔ بیگم کلثوم نواز11 ستمبر2018 کو لندن کے ہارلے سٹریٹ کلینک میں انتقال کر گئی تھیں.بیگم کلثوم نواز کی برسی پر ان کی ایک پرانی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے جس میں وہ حکمرانوں کو نااہل قرار دے رہی ہیں۔

یہ تو نہیں لکھا گیا کہ یہ ویڈیو کب کی ہے تاہم اس ویڈیو کو موجودہ حالات اور موجودہ حکمرانوں سے تشبیہ دی جا رہی ہے۔سوشل میڈیا پر صارفین کا کہنا ہے کہ کلثوم نواز کا بیان وزیراعظم عمران خان پر بلکل فٹ آتا ہے۔انہوں نے پہلے ہی عمران خان کی حقیقت بتا دی تھی۔۔وائرل ہونے والی ویڈیو میں کلثوم نواز کہتی ہیں کہ حکمران پاکستان میں امن و امان قائم کرنے میں فیل ہو گئے ہیں۔

(جاری ہے)

پاکستان کی معیشت کو چلانے میں ناکام ہو گئے ہیں۔پاکستان کی سفارتی سطح پر جن ملکوں سے دوستی تھی اس کو قائم رکھنے میں فیل ہو گئے ہیں۔یہ نالائق اور نااہل حکمران ہر جگہ فیل ہو گئے ہیں۔
۔خیال رہے کہ بیگم کلثوم نواز کی وفات کو آج ایک سال مکمل ہو گیا ہے۔ وہ29 مارچ 1950کولاہور کے کشمیری خاندان میں پیدا ہوئیں تھیں۔ 1999سی2002 تک پاکستان مسلم لیگ کی صدر بھی رہی ہیں اور تین بار1990 تا 1993،1997 تا1999 اور2013 تا2017 تک خاتون اول پاکستان بھی رہی ہیں ۔

میاں نوازشریف کے نااہل ہونے پر2017 حلقہ این اے 120سے ضمنی الیکشن جیت کر قومی اسمبلی کی رکن بنی۔ بیگم کلثوم نواز نے 12 اکتوبر 1999کے دن کو پاکستان کی تاریخ جمہوریت اور آئینی سیاست کا سیاہ ترین دن قرار دے دیا تھا۔اکتوبر1999 میں فوجی جنرل پرویز مشرف کے نواز شریف کی حکومت کا تختہ الٹ کر گرفتارکرنے پر خاندان اور پارٹی کو کڑے وقت سنبھالادینے والی بیگم کلثوم نواز تھیں ۔وہ11 ستمبر2018 کو لندن کے ہارلے سٹریٹ کلینک میں انتقال کر گئی تھیں -

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments