بلاول بھٹوکو اےپی سی کے اعلامیےکی پاسداری کرنی چاہیے، مولانا فضل الرحمان

بلاول بھٹو کی آزادی مارچ میں شرکت سے انکار وجہ نہیں جانتا، آزادی مارچ کامیابی سے ہمکنار ہوگا اور حکومت کو جانا ہوگا۔ سربراہ جے یوآئی ف مولانا فضل الرحمان کاخطاب

sanaullah nagra ثنااللہ ناگرہ جمعہ ستمبر 19:04

بلاول بھٹوکو اےپی سی کے اعلامیےکی پاسداری کرنی چاہیے، مولانا فضل الرحمان
لاہور(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔20 ستمبر2019ء) جمعیت علماء اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ بلاول بھٹو کواے پی سی کے اعلامیے کی پاسداری کرنی چاہیے، بلاول بھٹو کی آزادی مارچ میں شرکت سے انکار وجہ نہیں جانتا،آزادی مارچ کامیابی سے ہمکنار ہوگا،اور حکومت کو جانا ہوگا۔ انہوں نے آج یہاں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حکومت لوگوں کو گمراہ نہیں کرسکتی، مقبوضہ کشمیر کیلئے آزادی مارچ وقت کا تقاضا ہے۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ عوام اور سیاسی جماعتیں بھرپور انداز میں آزادی مارچ میں شرکت کریں گے۔ بلاول بھٹو کی آزادی مارچ میں شرکت سے انکار وجہ نہیں جانتا۔ بلاول بھٹو کواے پی سی کے اعلامیے کی پاسداری کرنی چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ آزادی مارچ کامیابی سے ہمکنار ہوگا،اور حکومت کو جانا ہوگا۔

(جاری ہے)

واضح رہے پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے حکومت کے خلاف دسمبر میں احتجاجی دھرنے کا اعلان کیا ہے۔

گزشتہ روز پی پی رہنماء اعتزاز احسن نے بتایا کہ  حکومت کا جانا چاہیے پارٹی کی پالیسی ہے، بلاول بھٹو نے کہا کہ دسمبر تک حکومت نہ گئی تو میدان عمل میں ہوں گے۔ مولانا فضل الرحمان مذہبی بنیاد پر لوگوں کو جمع کرنا چاہتے ہیں انہوں نے اپنے جلسوں میں بھی ذہبی ایشو ہی اٹھائے۔ پی ٹی آئی حکومت سے مس مینجمنٹ ہورہی ہے۔ حکومت مہنگائی اور بے روزگاری سے عوام کو اپنے خلاف کررہی ہے، جبکہ حکومت کے پاس اصلاح کا ابھی موقع ہے۔

میرا نہیں خیال جمہوریت کو کوئی خطرہ ہے، اگر جمہوریت کو خطرہ ہوا توپیپلزپارٹی جمہوریت کے ساتھ کھڑی ہوگی۔انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ سندھ کی گرفتاری کی خبریں مارکیٹ میں گردش کررہی ہیں۔ گرفتاری سے سندھ حکومت معطل ہوکررہ جائے گی۔اگر ان کو گرفتار کیا گیا تو پیپلزپارٹی کہہ چکی ہے کہ ان کو ہٹایا نہیں جایا گا، جس کے باعث جیل میں ہی کابینہ کے اجلاس ہوا کریں گے۔

لاہور شہر میں شائع ہونے والی مزید خبریں:

Your Thoughts and Comments